الغزالی

اپریل
22
by احمدقاسمی at ‏1:54 PM
(84 مناظر / 0 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
روئے زمین کی تقسیم اور تاریخ کی ابتداء​
محمد صالح اور شعبی سے مروی ہے کہ جس وقت حضرت ا ٓدم علیہ السلام کو جنت سے زمین پر اتار اور زمین میں ان کی نسل ایک بڑی تعداد میں پھیل چکی تو ان کے بیٹوں نے تاریخ کی ابتداء نزول ا ٓدم علیہ السلام سے کی اور یہ تاریخ کا سلسلہ نوح علیہ السلام کی بعثت تک جاری رہا ۔
پھر اس کے بعد نوح علیہ السلام سے تاریخ لکھنے کا سلسلہ جاری ہوا یہاں تک کہ زمین کی ہر چیز تباہ وبرد کردی گئی ۔ پھر نو ح علیہ السلام اور ان کے پیرو کار کشتی ؔسے اترے تو نوح نے اپنے بیٹوں کو تین حصوں میں تقسیم کردیا۔

(۱)سام:کو زمین کا وسطی حصہ دے دیا جس میں بیت المقدس نیل ، فرات ،دجلہ ، سیحون ، جیحون وفیشون کےعلاقے تھے یہ تمام فیشون سے نیل کے مشرقی جانب اور جنوبی ہواؤں کے چلنے کی جگہ سے شمالی ہواؤں کے چلنے کی جگہ تک محیط ہے ۔

حام: کو نیل کے مغربی کنارے سے شام کی ہواؤں کے چلنے تک کی جگہ عطا کی گئی ۔

یافث: کو فیشون سے لے کر صبح کی ہواؤں کے چلنے کی جگہ تک علاقہ عطا کیا گیا ۔

یہ سلسلہ تاریخ طوفان نوح علیہ السلام سے شروع ہو کر حضرت ابراہیم علیہ السلام کو آگ میں میں ڈالنے تک...
اپریل
08
by احمدقاسمی at ‏7:49 AM
(77 مناظر / 0 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
حقوق والدین​
لا تعبدون الااللہ وبا الوالدین احسانا
ترجمہ:تم عبادت نہیں کرو گے مگر خالص اللہ تعالی کی۔والدین کے ساتھ احسان عظیم کرو۔

تشریح: احسان عظیم کرنا جو کہ چند قسموں کا جامع ہو۔اور وہ تین قسمیں ہیں : پہلی قسم قول اور فعل سے تکلیف نہ دینا ، دوسری قسم جسم اور مال سے ان کی خدمت کرنا اور تیسری قسم جب حاضر ہونے کی طلب کریں تو حاضر ہو نا۔

پہلی قسم تو مطلق واجب ہے ۔ اس لئے اسے چھو ڑنے میں بہت بری نا فرما نی لا زم آتی ہے اور دوسری قسم مشروط ہے ان کے محتاج ہو نے اور اس کے خدمت کر نے پر قادر ہو نے پر ۔ پس اگر وہ محتاج نہ ہوں یا اسے قدرت نہیں ہے ۔ تو واجب نہیں ہے ۔اور تیسری قسم بھی مشروط ہے اس پر کہ حاضر ہو نے سے شرعی خرابی ثابت نہ ہو ۔ورنہ واجب نہیں اور اگر والدین یا ان میں سے ایک اسے فرما ئیں کہ نفلی عبا دتوں کو چھوڑ دے اور ہمارے پاس حاضر رہ تو ان کے حکم تعمیل پہلے ہے ۔اور اگر فرمائیں کہ واجبات ترک کردے یا حج فرض کے لئے نہ جاتو قبول نہ کر ے۔ اور اگر سنن مؤکدہ کو جیسے جماعت اور عرفہ کا روزہ چھڑائیں تو زیادہ صحیح یہ ہے کہ اگر ایک دو بار ترک کرائیں تو ان کا کہا مان لے اور...
اپریل
07
by طالب علم at ‏5:56 PM
(80 مناظر / 1 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
غیر مقلدین سے چند سوالات ۔ ۔ ۔


اپنے آپ کو اہل حدیث کہہ کر امت کو بہکانے والوں سے چند سوالات

غیر مقلدین سے چند سوالات

سوال1۔ کیا قرآن پاک میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل موجود ہے؟
(نوٹ) بالتفصیل سے مراد شرائط، ارکان، واجبات، سنن موکدہ، مستحبات، مباحات، مکروہات اور مفسدات ہیں، ان میں ہر ایک کی تعداد، ہر ایک کی تعریف،ہر ایک کے عمد اور سہوا چھوٹ جانے کا حکم صرحة موجود ہونا ہے۔
سوال2۔کیا بخاری شریف میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
سوال3۔کیا مسلم شریف میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
سوال4۔کیاسنن نسائی میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
سوال5۔ کیا جامع ترمذی میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
سوال6۔ کیا سنن ابی داؤد میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
سوال7۔ کیا سنن ابن ماجہ میں نماز پڑھنے کا طریقہ بالتفصیل و بالترتیب موجود ہے؟
(نوٹ) جب صحاح ستہ میں سے کسی ایک کتاب میں بھی نماز کے مکمل مسائل بالتفصیل وبالترتیب موجود نہیں تو یہ چھ6محدثین نماز کس طرح پڑھا کرتے تھے
سوال8۔ کیا کسی محدث نے...