الغزالی

فروری
21
by محمد اجمل خان at ‏8:13 PM
(3 مناظر / 0 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
۔
آخری الوداع

الوداع ۔۔ یہ لفظ سنتے ہی انسان اداس اور غمگین ہو جاتا ہے۔
یہ الوداع زندگی میں صرف ایک بار نہیں آتی بلکہ بار بار آتی ہے۔
انسان کی شروعات بھی الوداع سے ہوتی ہے اور اختتام بھی الوداع سے۔
یہ الوداع کسی کی آنکھوں میں خوشی کی آنسو لاتی ہے تو کسی تو غم کی آنسو رلاتی ہے۔
بچہ اپنی ماں کی بطن کو الوداع کہہ کر دنیا میں آتے ہی روتا ہے اور دنیا والوں کو ہنساتا ہے۔
اور ساری زندگی یہ رونے اور ہنسنے کا الوداعی کھیل جاری ہتا ہے۔ انسان اپنی ہر سانس کو الوداع کہہ رہا ہوتا ہے لیکن اسے اس کا شعور نہیں ہوتا۔

پرائمیری تعلیم کے اختتام پر الوداع‘ سیکنڈری تعلیم کے اختتام پر الوداع اور پھر کالج و یونیورسیٹی سے الوداع۔ ان تعلیمی اداروں میں جاکر انسان دنیا کی بقیہ زندگی کیلئے اپنا کیریئر بناتا ہے اورپھر انہیں الوداع کہہ کر دنیا کی عملی زندگی میں قدم رکھتا ہے۔ انہیں الوداع کہنا آسان نہیں ہوتا اور نہ ہی اس الوداع کا درد بھولا جا سکتا ہے۔ لیکن ہر الوداع میں خوشیاں بھی سمائی ہوتی ہیں اور حقیقی خوشی صرف انہیں ملتی ہے جو وقت ضائع کئے بغیر محنت کرکے...
فروری
21
by محمد اجمل خان at ‏11:51 AM
(5 مناظر / 0 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
۔
ایک عظیم تحفہ

ہم اللہ کے عاجز بندوں کیلئے اکثر اپنے محسن کے احسان کا بدلہ اتارنا ممکن نہیں ہوتا لیکن ہمارے پیارے نبی کریم ﷺ نے ہمیں وہ طریقہ بتا دیا ہے جس پر عمل کرکے ہم اپنے محسن کا بدلہ ادا کر سکتے ہیں۔

آپ ﷺ نے فرمایا جس شخص کے ساتھ کوئی احسان کیا جائے اور وہ احسان کرنے والے کے حق میں یہ دعا کرے’’ جَزَاکَ اللَّهُ خَيْرًا‘‘ (یعنی اللہ تعالیٰ تجھے اس کا بہتربدلہ دے) تو اس نے اپنے محسن کی کامل تعریف کی ۔(مشکوۃ شریف ۔ جلد سوم ۔ عطایا کا بیان ۔ حدیث 239)

کامل تعریف کرنے کا مطلب ہے کہ بندہ اپنے محسن کا بدلہ اتارنے اور اس کی تعریف کرنے میں اپنے آپ کو عاجز اور مجبور قرار دیتے ہوئے ’’ جَزَاکَ اللَّهُ خَيْرًا ‘‘ کہہ کر اپنے تئیں اس کے شکر کا حق ادا کر دیا کیونکہ اسنے اس کا بدلہ اللہ تعالیٰ پر سونپ دیا کہ اللہ تعالیٰ اسے دنیا اور آخرت میں بہترین اجر عطا فرمائے اور اللہ تعالیٰ سے بہتر اجر کون دے سکتا ہے کیونکہ للہ تعالٰی جب اجر دے گا تو اپنی شان کے مطابق دے گا ۔...
فروری
20
by اشماریہ at ‏3:00 PM
(11 مناظر / 0 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
السلام علیکم و رحمۃ اللہ و برکاتہ
ورچوئل کرنسیوں کے کام کرنے کے طریقہ کار اور مائننگ کی تفصیلات کے بارے میں دو تحاریر پیش خدمت ہیں۔ وہ علماء کرام جو ان پر حکم لگانے کے بارے میں کام کر رہے ہیں وہ ان سے استفادہ کر سکتے ہیں۔
پی ڈی ایف فائلیں ہیں۔ یونیکوڈ میں لکھنے کی صورت میں تصاویر کی سیٹنگ کا مسئلہ ہوگا۔
بٹ کوائین کیسے کام کرتی ہے؟
مائننگ کیا ہوتی ہے اور کیسے ہوتی ہے؟
فروری
16
by بنت عبد الحميد at ‏2:11 PM
(18 مناظر / 1 پسند کردہ)
0 تبصرہ جات
نام اعلی ہے تو بے شک کام بهی اعلی ہے
میرے صحابہ کا تو ہر کلام بهی اعلی ہے

پنج تن ہی نہیں پاک یہ ذہن سے نکال تو
میرے صحابہ تو تمام کے تمام ہی اعلی ہے

اہ جس وقت گود ِصریق میں چہرہَ انور ہو
سبحان اللہ اک وہی تو شام ہی اعلی ہے

حجۃُ الوداع ہے نم ہے ہر اک آنکھ آج
آہ میرے بنی ﷺ کا ہر ہر کلام ہی اعلی ہے

خوش نصیب ہیں حضرت ابو ایوب انصاری
میرے نبی ﷺ کا تو ہر جگہ قیام ہی اعلی ہے

وہ غزوہ خندق اور پیٹ پہ بندھے پتھر
اے لوگو دیکھو نا میرے نبی کا طعام بھی اعلی ہے

چلیں دهوپ میں اور سایہ بھی نا پڑے زمین پہ
دیکھو میرے نبی کا تو ظلام بھی اعلی ہے

حضرت انس بن نضر کی شہادت بھی کیا ہی عجیب تھی
جنت کی خوشبو میں دیکھو نا مقام بھی اعلی ہے

اقرأ رانی
فروری
16
by بنت عبد الحميد at ‏1:16 PM
(19 مناظر / 1 پسند کردہ)
1 تبصرہ جات
ملتان کے لیے کوچ کے سفر کا فیصلہ ہوا
اتنے لمبے روٹ پر کوچ کا یہ پہلا تجربہ ہے
سفر کیا بس یوں سمجھیے کہ ہر ہر لمحہ اک احساس ندامت ہے جو شدت سے غالب ہے
آگے والی سیٹ پر چوبیس پچیس سال کی اک خاتون ساتھ تین سالہ بچی اور بچی کی دادی ۔۔
ابھی سفر شروع ہی ہوا تھا کہ بچی نے رونا شروع کردیا
ماں نے جھٹ موبایل نکالا اسمیں پہلے تو نانی کی مورنی پھر کاٹھی کے گھوڑے سے بہلانے کی کوشش کی گئی مگر جب اسمیں کامیابی نا مل۔سکی تو
ماں نے اگلا کام یہ کی انڈین گانوں کی وڈیوز کی اک لمبی پلے لسٹ آٹو پر لگا کر سیل بچی کے ہاتھ میں پکڑا دیا ۔۔۔
اور دوا نے تو جیسے گویا امرت کا کام کیا تین سالہ بچی ایک دم شانت ۔۔۔
اب پوری کوچ ان گانوں سے اور ساتھ والی سیٹ پر بیٹھے حضرات ویڈیو سے بھی " محضوض " ہوتے رہے ۔۔۔معصوم بچی بھی بدلنے منظروں مین کھو چکی تھی
جی چاہ رہا تھا بچی کے ہاتھ سے سیل چھین لیا جاے
ماں تو ماں دادی پر رونا آیا کہ اک زمانے مین ماوں سے بڑھ کر دادی نانیاں اخلاقی تربیت کیا کرتیں تھیں ۔۔۔
مگر کیا کیجیے کہ آج کل دادی نانیوں نے بھی اپنا کام چھوڑ دیا ۔۔۔
خیر وہ بچی اسی گانوں کی اواز اور بدلتے منظروں میں سوگئی ۔۔۔...