امام ابن معین سے امام ابو حنیفہ کی تعدیل

'فقہاء ومحدثین' میں موضوعات آغاز کردہ از الطحاوی, ‏جنوری 2, 2017۔

  1. الطحاوی

    الطحاوی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    1
    موصول پسندیدگیاں:
    1
    صنف:
    Male
    اسلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکتہ

    ♦♦♦♦♦امام ابن معین الحنفی سے امام ابو حنیفہ رح کی تعدیل ♦♦♦♦

    امام سبط ابن الجوزی رح نے اپنی کتاب الانتصار الترجیح میں ایک روایت بیان کرتے ھیں

    متن

    روی عن ابی حنیفہ سفیان ثوری عبداللہ بن مبارک حماد بن زید ھشیم وکیع عبادبن العوام جعفر بن عون,ابو عبدالرحمن عبداللہ بن یزید المقری وجماعہ کثیر وھو ثقہ لابس بہ

    ابو حنیف سے کثیر جماعت نے حدیث بیان کی ............
    اور اپ ثقہ لا باس بہ ھیں

    ⬅⬅سند کی تحقیق
    ◆سبط ابن الجوزی

    امام زھبی

    وكان إمامًا، فقيهًا، واعظًا، وحيدًا فِي الوعظ، علامة فِي التاريخ والسِّير

    قال ابو شامة .....وكان فاضلًا عالمًا، ظريفًا، منقطِعًا،

    وقال عمر ابن الحاجب: كان بارعًا فِي الوعظ، كيِّس الإيراد، له صِيت فِي البلاد، وله يدٌ فِي الفقه واللّغة والعربيّة. وكان حُلو الشّمائل، كثير المحفوظ، فصيحًا، حسَن الصوت، يُنشئ الخُطب ويحب الصالحين والعزْلة
    تاریخ اسلام

    امام العینی فرماتے ھیں

    سِبْطُ ابن الجوزى: الشيخ شمس الدين أبو المظفر يوسف بن الأمير حسام الدين قزغلى بن عبد الله، عتيق الوزير عون بن هبيرة الحنفى، أحد السادات الحنفية البغدادى،

    وقد كان حسن الصورة، طيب الصوت، حسن الوعظ، كثير الفضائل والمصنفات، وله مرآه الزمان في عشرين مجلداً من أحسن التواريخ، انتظم فيها المنتظم تاريخ جدّه وزاد عليه، وذيل إلى زمانه

    عقد الجمان فی تاریخ اھل زمان

    ◆امام سبط ابن الجوزی اپنے شیخ کی توثیق کرتے ھیں جن سے بیان کررہے ھیں

    الشیخ الصالح الثقة ابو طاھر احمد بن محمد بن حمدیہ العکبری

    ◆تیسرے راوی
    أبو الكرم المبارك بن الحسن بن أحمد بن علي بن فتحان الشهرزوري البغدادي

    کے متعلق زھبی فرماتے ھیں
    الإمام المقرئ المجود الأوحد ، شيخ القراء

    قال السمعي: «شيخ صالح دين خير، قيم بكتاب الله، عارف باختلاف الروايات والقراءات، حسن السيرة، جيد الأخذ على الطلاب، عالي الروايات

    سیر اعلام النبلا
    ◆چوتھا راوی
    محمد بن علي بن محمد بن عبيد الله بن عبد الصمد بن المهتدي بالله

    امام زھبی فرماتے ھیں
    الإمام العالم الخطيب ، المحدث الحجة ، مسند العراق
    قال الخطيب كان ثقة نبيلا

    سیر اعلام النبلا

    ◆پانچواں راوی

    ابن أبي الفوارس
    امام زھبی فرماتے ھیں

    الإمام الحافظ المحقق الرحال ، أبو الفتح
    سیر اعلام النبلا
    اپ مشہور ثقہ اماموں میں سے ھیں

    ◆چھٹا راوی
    ابو بکر محمد بن حمید السھل المخرومی
    .امام الناقد ابو نعیم فرماتے ھیں
    سألت أبا نعيم الحافظ عن محمد بن حميد المخرمي، فقال: ثقة.
    تاریخ بغداد جلد 3 ص 67
    امام ضيا الدين المقدسي رح نے اس سے اپنی کتاب میں استدال کیا ھے اور وہ اس کتاب میں اپنے نزدیک ثقہ راوی سے استدال کرتے ھیں
    احادیث مختارہ رقم ٢٤٩٦
    محقق کتاب نے اسناد صحیح کا حکم لگایا ھے
    ◆ساتواں راوی
    علي بْن الحسين بْن حيان بْن عمار بْن واقد، أَبُو الحسن:
    امام خطیب فرماتے ھیں
    کان ثقة
    تاریخ بغداد الزیلویة جلد 11 ص 394
    [​IMG]
    ابن عثمان نے اسے پسند کیا ہے۔
  2. ابن عثمان

    ابن عثمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    208
    موصول پسندیدگیاں:
    198
    صنف:
    Male
    وعلیکم السلام و رحمۃ اللہ و برکاتہ۔
    جزاک اللہ بھائی۔
    لیکن محترم بھائی اگر کوئی ناواقف دوست کہے کہ ۔۔میں نہیں مانتا۔۔میں نہیں مانتا ۔۔۔
    تو کَیا کیا جائے؟ (مسکراہٹ)

اس صفحے کو مشتہر کریں