انوار البدر کا علمی و تنقیدی جائزہ

'بحث ونظر' میں موضوعات آغاز کردہ از اشماریہ, ‏ستمبر 5, 2017۔

  1. محسن اقبال قمر

    محسن اقبال قمر وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    20
    موصول پسندیدگیاں:
    7
    صنف:
    Male
    جگہ:
    United Arab Emirates
    جزاک اللہ۔۔۔۔۔۔ بہت اہم اور علمی تحریر ہے۔۔
    اشماریہ نے اسے پسند کیا ہے۔
  2. ابن عثمان

    ابن عثمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    189
    موصول پسندیدگیاں:
    181
    صنف:
    Male
    عنوان کو تبدیل کر کے ایسا رکھ دیں کہ موضوع کا صحیح اندازہ ہوسکے ۔دوسرا
    کیا آپ نے اس کے بعد تحریر نہیں لکھی؟
    اور کیا کسی مخالف کی طرف سے آپ کی تحریر پر تبصرہ کیا گیا ہے ؟
  3. اشماریہ

    اشماریہ رکن مجلس العلماء رکن مجلس العلماء

    پیغامات:
    418
    موصول پسندیدگیاں:
    265
    صنف:
    Male
    موضوع مکمل ہونے کے بعد عنوان مناسب کر دوں گا ان شاء اللہ.
    اس کے بعد تاحال وقت نہیں ملا, نہ ہی طبیعت نے ساتھ دیا. لیکن ذہن میں بدستور موجود ہے. ان شاء اللہ جلد لکھتا ہوں.
    کسی مخالف کی طرف سے تبصرہ نہیں کیا گیا اور آئندہ تبصرہ ہوگا بھی تو امید ہے "دل کی تسلی" کے لیے ہوگا.
  4. imani9009

    imani9009 وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    135
    موصول پسندیدگیاں:
    63
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    انوار البدر کے رد میں لکھی گئی کتاب
    انوار الحجہ از شیخ عبدا لرشید قاسمی سدھار نگری

    لنک
    اشماریہ نے اسے پسند کیا ہے۔
  5. اشماریہ

    اشماریہ رکن مجلس العلماء رکن مجلس العلماء

    پیغامات:
    418
    موصول پسندیدگیاں:
    265
    صنف:
    Male
    زیادہ عمدہ نہیں ہے۔
  6. ابن عثمان

    ابن عثمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    189
    موصول پسندیدگیاں:
    181
    صنف:
    Male
    ابھی کردیں ، عنوان میں کتنی دیر لگے گی ۔
    ممکن ہے بعض لوگ اس کو مون لائٹ پر تبصرہ سمجھتے ہوں ۔اور فلکیات کا موضوع سمجھ کر اس سے عدم مناسب کی وجہ سے نہ دیکھتے ہوں ۔(مسکراہٹ)
    اشماریہ نے اسے پسند کیا ہے۔
  7. اشماریہ

    اشماریہ رکن مجلس العلماء رکن مجلس العلماء

    پیغامات:
    418
    موصول پسندیدگیاں:
    265
    صنف:
    Male
    آپ کوئی اچھا سا عنوان بتا دیجیے۔
  8. ابن عثمان

    ابن عثمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    189
    موصول پسندیدگیاں:
    181
    صنف:
    Male
    یعنی جو بولے وہی کُنڈی کھولے ۔(مسکراہٹ)
    جس کتاب پر آپ تبصرہ کر رہے ہیں ۔ میں نے نہیں دیکھی ۔اور مصنف کی تحریروں کی شدت کی وجہ سے کوئی تحریر پڑھی نہیں جاتی ۔
    اس لئے میں تو عنوان نہیں رکھ سکتا ۔ویسے تو عنوان رکھنا مصنف کا ہی زیادہ حق ہے ۔کیونکہ اس سے اس کی رائے کا اظہار ہوتا ہے ۔
    پھر بھی ۔۔۔یہ بھائی شاید واقف ہوں ۔یہ کوئی عنوان تجویز کر دیں ۔
    @جمشید
    @احمد پربھنوی
  9. جمشید

    جمشید وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    118
    موصول پسندیدگیاں:
    42
    جگہ:
    Afghanistan
    ’’انوارالبدر کا مختصر علمی وتنقیدی جائزہ‘‘اگرمکمل تنقید کرنی ہو تو ،اگر صرف ذراع تک بحث محدود رکھنی ہے تو یوں کرلیں ،انوارالبدر میں ذراع کی بحث کا تنقیدی جائزہ،ویسے نام کچھ بھی رکھیں، نام میں کیارکھاہے؟آج کل کتابوں کی بہتات ہے،ہرمہینہ ڈھیڑ ساری کتابیں شائع ہوکرسامنے آرہی ہیں، لیکن بمشکل اس میں سے کسی کتاب کو علمی کہاجاسکتاہے اورجس کو پڑھ کر معلوم ہو کہ واقعتا کچھ نیاسیکھاہے،لہذا نام سے زیادہ زور نفس مضمون کی علمی ثقاہت پر ہونی چاہئے ،لیکن اس کا یہ بھی مطلب نہیں کہ نام پر توجہ نہ دی جائے، نام پر تواس حد تک توجہ ضرور دی جائے کہ نفس مضمون کا پتہ چلے ،بقول فیض احمد فیض
    ان دنوں بدنام ہے ہرایک دیوانے کا نام
    تم کوئی اچھاسارکھ لو اپنے ویرانے کانام
    احمد پربھنوی اور اشماریہ .نے اسے پسند کیا ہے۔
  10. ابن عثمان

    ابن عثمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    189
    موصول پسندیدگیاں:
    181
    صنف:
    Male
    تھوڑا سا اضافہ یہ کہ’’کی ورڈ‘‘ اصول کے تحت اصل کتاب کا پورا نام (انوارالبدر فی وضع الیدین علی الصدر کفایت اللہ سنابلی) عنوان میں ہو۔ تاکہ جو آدمی اس کتاب کو سرچ کرے تو اس کو تبصرہ بھی نظر آئے ۔اور فورم میں گزرنے والے کو بقول جمشید بھائی نفس مضمون کا پتہ چلے ۔
    اشماریہ اور جمشید .نے اسے پسند کیا ہے۔
  11. احمد پربھنوی

    احمد پربھنوی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    23
    موصول پسندیدگیاں:
    7
    صنف:
    Male
    جگہ:
    مہاراشٹر، انڈیا
    السلام علیکم و رحمۃ اللہ
    میری نظر میں انوار البدر کا علمی و تنقیدی جائزہ بہتر ہوگا کیونکہ اگر کسی اور نے کچھ سندوں وغیرہ پر اپنی بات رکھنی ہو تو وہ بھی یہاں رکھ سکے ـ

اس صفحے کو مشتہر کریں