اکابرین کا رمضان

'ماہنامہ افکار قاسمی شمارہ نمبر 8، 2013 ماہ رمضان ن' میں موضوعات آغاز کردہ از پیامبر, ‏جون 20, 2013۔

  1. پیامبر

    پیامبر وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    1,245
    موصول پسندیدگیاں:
    568
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    <div style="direction:rtl;"><TABLE border="1" width="800">
    <table border="1" width="600" align="center">
    <tr>
    <td style="text-align:center; font-size:36px; padding:20px;">
    اکابرین کا رمضان
    </td>
    </tr>

    <tr>
    <td style="text-align:center; font-size:26px; padding:20px;">
    حضرت مولانا نورالحسن انور
    </td>
    </tr>
    <tr>
    <td style="text-align:justify; font-size:22px; padding:20px;">
    رمضان المبارک کے جو فضائل ہیں وہ کسی مسلمان سے مخفی نہیں ہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔اس کے انوار وبر کات سے ہر مسلمان حسب استعدادومقدور کچھ نہ کچھ نفع حاصل کرتا ہی ہے ۔۔۔۔۔۔ لیکن عارفین و اولیاء اللہ ۔۔۔۔۔۔۔ کے یہاں جیسا اس ماہ مبارک کا استقبال و اہتمام ہو تا ہے وہ ہم جیسوں کے وہم وگمان میں نہیں آسکتا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ جن خوش نصیبوں نے حضرت نانو توی رحمۃ اللہ حضرت مولانا رشید احمد گنگو ہی رحمۃ اللہ ۔۔۔۔۔۔۔۔ حضرت تھانوی رحمۃ اللہ،حضرت مولا نا خلیل احمد سہارنپوری رحمۃ اللہ مولا نا حسین احمد مدنی رحمۃ اللہ اور دیگر اکابرین علماء دیوبند کے ساتھ رمضان گزارنے کی سعادت نصیب ہو چکی ہے وہ کسی حد تک اس کی لذت سے آشنا ہو چکے ہیں ۔۔۔۔۔۔ کہ اکابرین رمضان کسطرح گزارتے تھے آئیے ذرا تاریخ کے اوراق سے ان لمحات کو دیکھنے کی کوشش کرتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔

    معمولات حضرت حاجی امداد اللہ مہا جر مکی رحمۃ اللہ

    حکیم الا مت حضرت تھانوی رحمۃ اللہ لکھتے ہیں ۔۔۔۔۔۔۔کہ حضرت حاجی صاحب نے فر مایا ۔۔۔۔۔۔۔ کہ تمھاری تعلیم کے واسطے کہتا ہوں یہ فقیر عالم شباب میں اکثر راتوں کو نہیں سو یا۔۔۔۔۔ خصو صاً رمضان شریف میں مغرب کے بعد دولڑکے حافظ یوسف اور حافظ احمد حسین سوا سوا پارہ عشاء تک سناتے ۔۔۔۔۔۔ بعد عشاء دو حافظ اور سناتے ۔۔۔۔۔ ان کے بعد ایک حافظ نصف شب تک اس کے بعد تہجد کی نماز میں دو حافظ غرض تمام رات اسی میں گزر جاتی (امدادالمشتاق)

    قطب عالم حضرت گنگوہی رحمۃ اللہ کے معمولات

    آپ ستر سال کی عمر میں دن بھر روزہ اور بعد مغرب بیس رکعت صلوۃ الاوابین پڑھا کرتے تھے ۔۔۔۔۔جن میں دو پارے قرآن کے ختم کرتے پھر کھانے کے لئے گھر جاتے تو تلاوت جاری رہتی ۔۔۔۔۔ پھر تراویح کے بعد آرام کرتے اور پھر تہجد کے لئے ایک بجے ہی اٹھ جاتے سحری کے قریب تہجد سے فراغت ہوتی ۔۔۔۔۔ فجر کے بعد آٹھ بجے تک وظائف میں مصروف رہتے ۔۔۔۔۔۔۔بعد از ظہر حجرہ کا دروازہ بند کر کے تا عصر کلام اللہ کی تلاوت میں مصروف رہتے۔

    حضرت مولانا قاسم نانوتوی رحمۃ اللہ کے معمولات

    حضرت نے سفر حجاز میں ماہ رمضان میں روزانہ ایک پارہ حفظ کرتے اور تراویح میں سنا دیتے ۔۔۔۔۔۔ حفظ کے بعد آُپ نے ایک مرتبہ ستائیس پارے ایک رکعت میں پڑھے ۔

    حضرت شیخ الھند رحمۃ اللہ کے معمولات

    حضرت مولانا سید اصغر حسین میاں صاحب ر حمۃ اللہ سوانح شیخ الھند میں تحریر فر ماتے ہیں۔
    رمضان میں حضرت کی خاص حالت ہوتی تھی دن رات عبادت کے سوا کوئی کام ہی نہ ہو تا۔۔۔۔۔تمام رات قرآن مجید سننے میں گزار دیتے ۔۔۔۔۔۔ تراویح کے بعد حاضرین کو مضامین علمیہ سے محظوظ فر ماتے چند منٹ لیٹ جاتے اس کے بعد ایک حافظ چار پارے سناکر فارغ ہو جاتا پھر دوسرا شروع کر دیتا سحر کے وقت تک یہی سلسہ جاری رہتا۔

    معمولات حکیم الا مت حضرت تھانوی رحمۃ اللہ

    رمضان میں حضرت خود قرآن سناتے نصف قرآن تک سوا سپارہ پھر ایک پارہ روز پڑھتے۔۔ تہجد کی نماز میں ایک پارہ ختم فر مادیتے ۔۔۔پورا عشرہ اعتکاف فر ماتے اور اس میں تصنیف کا سلسلہ جاری رہتا۔

    حضرت مولا نا خلیل احمد سہا رنپوری رحمۃ اللہ کے معمولات

    افطار میں مدینہ منورہ کی کھجوریں اور آب زمزم استعمال کرتے مغرب کے بعد نوافل پھر
    کھانا تناول فرماتے جو پارہ تراویح میں حضرت سناتے وہی مغرب کے بعد پڑھتے یہ ہمارے اکابرین کا انداز تھا یہ وہ لوگ تھے جنہوں نے ان لمحات کو قیمتی بنایا ۔۔۔۔۔۔ رمضان کی برکات سے کامل مستفیض ہوئے۔ اللہ ہمیں بھی رمضان کی اسی طرح قدر کی تو فیق عطا فر ماے آمین ۔
    </td>
    </tr>
    </table></div>
  2. نوید

    نوید وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    47
    موصول پسندیدگیاں:
    4
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
    یہ مضمون پہلے بھی پڑھ چکے بہت سی جگہ اور مفصل شکریہ
  3. پیامبر

    پیامبر وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    1,245
    موصول پسندیدگیاں:
    568
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    محترم تبصرہ کے لیے شکریہ۔
    ضروری نہیں کہ سب ممبرز نے پڑھا ہو۔ تکرار نقصان دہ تو نہیں ہوتا۔
  4. محمد نبیل خان

    محمد نبیل خان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    8,688
    موصول پسندیدگیاں:
    772
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    بہت مفید مضمون ہے
    جزاک اللہ خیرا
  5. بنت حوا

    بنت حوا فعال رکن وی آئی پی ممبر

    پیغامات:
    4,572
    موصول پسندیدگیاں:
    458
    صنف:
    Female
    جگہ:
    Pakistan
    بہت مفید مضمون ہے
    جزاک اللہ خیرا
  6. خادمِ اولیاء

    خادمِ اولیاء وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    405
    موصول پسندیدگیاں:
    29
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    جزاک اللہ مفتی نور الحسن صاحب
    اکابرین کے رمضان کے حوالے سے مرتب مضمون شامل کرکے آپ نے
    دریا کو کوزے میں بند کردیا۔احسنت

اس صفحے کو مشتہر کریں