اے انسان! زیب نہیں دیتی دُنیا میں غفلت تجھے

'آپ کی شاعری' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد ارمغان, ‏مارچ 8, 2013۔

  1. محمد ارمغان

    محمد ارمغان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    1,661
    موصول پسندیدگیاں:
    105
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    اے انسان! زیب نہیں دیتی دُنیا میں غفلت تجھے
    توشہ رکھا نہیں کیسے کہو گےخدا سے بخش دے مجھے

    نفس و شیطاں تو چاہے ہے یہ بندہ بھی ماسوا میں اُلجھے
    بے فائدہ ہو گا جب آخرت میں سب دیکھ کر سمجھے

    تو ہی تو ہے مولیٰ دِل میں صرف نہیں ہے دوجے
    رہے یہ کوشش تا دمِ زیست کہ سب غیر بجھے​
  2. محمد نبیل خان

    محمد نبیل خان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    8,688
    موصول پسندیدگیاں:
    772
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
  3. محمدداؤدالرحمن علی

    محمدداؤدالرحمن علی منتظم۔ أیده الله منتظم رکن افکارِ قاسمی

    پیغامات:
    6,196
    موصول پسندیدگیاں:
    1,674
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    کاش کہ آج کا مسلمان اس بات کو سمجھ جائے تو ایسے ذلیل و خوار نہیں ہو گا

    جزاک اللہ خیرا

اس صفحے کو مشتہر کریں