تقلید مجھے سمجھا دو۔!

'بحث ونظر' میں موضوعات آغاز کردہ از اصلی حنفی, ‏مارچ 28, 2012۔

موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔
  1. Amjad Ali

    Amjad Ali وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    4
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    عزیزم ۛ؛
    اس سائٹ سے بھی آپ کو بہت رہنمائی مل جائے گی ۔اِن شاء اللہ
    http://alittehaad.org
  2. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    جزاکم اللہ خیرا عزیزم میں اس سائٹ یعنی الغزالی پر بہت مشکل سے وقت نکال کر آتا ہوں اور آپ مجھے دوسری سائٹ پر بھیج رہے ہیں۔
    آپ سے گزارش ہے کہ اس کیے گئے اعتراض یا سوال پر جو رہنمائی ہے وہ یہاں پوسٹ فرمادیں تاکہ سب کے علم میں اضافہ ہوجائے۔
    لیکن ہوں اس سوال سے متعلقہ۔ ادھر ادھر کی باتوں پر مشتمل نہ ہو۔
  3. ناصرنعمان

    ناصرنعمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    58
    موصول پسندیدگیاں:
    23
    جگہ:
    Akrotiri
    کاش کہ اصلی حنفی صاحب واقعی سنجیدگی سے سیکھنے سکھانے کی جستجو میں نظر آتے تو ان شاء اللہ تعالیٰ آپ کے پیش کردہ ایک ایک اشکال کی وضاحت کرنے کی کوشش کرتے ۔۔۔۔لیکن افسوس کہ تمام قارئین کرام کے سامنے یہ حقیقت کھلی کتاب کی طرح موجود ہے کہ اصلی حنفی صاحب کی جستجو کہاں تک محدود ہے ؟؟؟
    بہرحال ہم تمام قارئین کرام کے سامنے ایک اور واضح مثال پیش کردیتے ہیں جس سے اصلی حنفی صاحب کی عقل شریف اور ان کی ذہنیت کا بخوبی انداہ ہوجائے گا۔
    جب ایک موقعہ پر ہم نے یہ جواب لکھا :

    جس کے جواب میں اصلی حنفی صاحب نے نیچے دیا گیا جواب فرمایا :
    یعنی اصلی حنفی صاحب نے بالکل ہماری امیدوں کے مطابق جواب دیا ۔۔۔۔یعنی چوں کہ یہ بات “کہ دونوں عمل سنت ہیں“ اصلی حنفی صاحب کی عقل شریف میں نہیں اتری ۔۔۔۔ لہذا انہوں نے صریح الفاظ میں تو رد نہیں کیا ۔۔۔۔لیکن سوالیہ نشان بنا کر دبے لفظوں میں مسئلہ عقل میں نہ آنے کی وجہ سے انکار کیا ۔
    محترم قارئین کرام !
    یہی حقیقت ہے ان غیر مقلدین کی ۔۔۔کہ جو بزرگوں کا قول ان کی عقل کے معیار پر پورا نہ اترے اسے رد کردو؟؟؟
    اس کی واضح ترین مثال آپ حضرات کے سامنے ہے کہ موصوف نے یہ جواب بھی دینا گوارا نہیں کیا کہ ان کے اپنے بزرگوں نے بھی یہی جواب دیا جو حضرت شاہ ولی اللہ رحمہ اللہ یا عبدالقادر رحمہ اللہ نے جواب فرمایا؟؟؟؟
    اور یہی غرمقلدین کے وہ بزرگ ہیں کہ جنہوں نے عام مسلمانوں کو علماء دین و فقہائے کرام کے اقوال سمجھ نہ آنے پر رد کرنے کی تعلیم دی ؟؟؟
    اور آج ان کی تربیت کا یہ نتیجہ نکل رہا ہے کہ ان کے سیکھائے ہوئے سبق کے بعد آج نئی نسل کے غیر مقلدین اپنے انہی بزرگوں کے اقوال کو رد کرنے پر تیار بیٹھے ہیں ؟؟؟
    کیوں کہ اُن بزرگوں کو تو فقھائے کرام کے علم کی گہرائیاں نہ سمجھ آئیں تو انہوں نے فقھائے کرام کے مسائل کا رد کیا۔۔۔۔ لیکن بہت سے مسائل جو انہیں (اپنے تھوڑا بہت علم رکھنے کی وجہ سے)سمجھ آئے (جیسا کہ رفع یدین و ترک رفع یدین) تو فرمادیا کہ دونوں فریقین حق پر ہیں ۔۔۔۔لیکن کیوں کہ ان بزرگوں کے پاس نسبتا بہتر علم تھا لہذا پھر بھی ایسے مسائل سمجھ میں آگئے ۔
    لیکن جیسا کہ ہم پچھلی پوسٹ میں واضح کرچکے ہیں کہ دنیا میں ہر کسی عقل و فہم کا معیار ایک جیسا نہیں ہوتا ۔۔۔۔لہذا عام لوگوں کو بزرگان دین(جنہوں نے اپنی ساری زندگی علم دین حاصل کیا) کے اقوال کو رد کرنے کی تعلیم دینا کسی طور مناسب نہیں ۔
    اور اس کا نتیجہ آج یہ سامنے آیا کہ آج اصلی حنفی صاحب کو اپنے ہی بزرگوں کی طرف سے واضح کیا مسئلہ (کیوں کہ عقل شریف میں نہیں اتر رہا )رد کرنے پر تیار بیٹھے ہیں ؟؟؟
    اور بڑی دلچسپ بات یہ ہے کہ موصوف اپنے بزرگوں کے اقوال پر ہم سے وضاحت طلب کررہے ہیں ؟؟؟
    ہے نا کمال کی بات ؟؟؟
    لیکن الحمد للہ ہمارے بزرگوں نے ہمیں یہ تعلیم ہرگز نہ دی کہ جو مسئلہ عقل میں نہ اترے تو ایسے علماء دین کے اقوال کو رد کردو ۔۔۔۔۔جن علماء دین کی دینی خدمات کا زمانہ معترف رہا ہے ۔۔۔۔جن کا علم ہم جیسے جاہل لوگوں سے ہزاروں گنا زیادہ ہے۔
    لہذا اصلی حنفی صاحب کی عقل شریف میں یہ مسئلہ اتارنے کے لئے ایک حدیث پاک پیش خدمت ہے کہ ایک مسئلہ پر دو علیحدہ علیحدہ عمل کس طرح اطاعت رسول صلیٰ اللہ علیہ وسلم کہلاسکتے ہیں :
    ایک حدیث کا مفہوم ہے کہ آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے صحابہ کرام رضوان اللہ تعالیٰ علیہم اجمعین کو ایک مہم پر روانہ فرمایا اور ہدایت فرمائی کہ عصر کی نماز فلاں جگہ جاکر پڑھنا۔ نماز عصر کا وقت وہاں پہنچنے سے پہلے ختم ہونے لگا تو صحابہ کی دو جماعتیں ہوگئیں، ایک نے کہا کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے وہاں پہنچ کر نمازِ عصر پڑھنے کا حکم فرمایا ہے، اس لئے خواہ نماز قضا ہوجائے مگر وہاں پہنچ کر ہی پڑھیں گے، دوسرے فریق نے کہا کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کا منشائے مبارک تو یہ تھا کہ ہم غروب سے پہلے پہلے وہاں پہنچ جائیں، جب نہیں پہنچ سکے تو نماز قضا کرنے کا کوئی جواز نہیں۔
    بعد میں یہ قصہ بارگاہ اقدس صلی اللہ علیہ وسلم میں پیش ہوا تو آپ نے دونوں کی تصویب فرمائی اور کسی پر ناگواری کا اظہار نہیں فرمایا۔

    تو جناب اصلی حنفی صاحب یہ وہ مقام ہے کہ جہاں دو علیحدہ علیحدہ عمل ہوتے ہوئے بھی دونوں عمل اطاعت رسول صلیٰ اللہ علیہ وسلم کہلائے ۔۔۔جس پر خود جناب رسول اللہ صلیٰ اللہ علیہ وسلم کی طرف سے کسی کے بھی عمل سے ناگواری کا اظہار نہ فرمایا ۔
    اگر آپ اس حدیث پر باریکی سے غور کرلیں گے تو ہمیں امید ہے کہ نہ صرف آپ کو آپ کے مذکورہ اشکال کا باآسانی جواب مل جائے گا ۔۔۔بلکہ ممکن ہے کہ تقلید و اجتھاد پر بہت سے سوالات کے جوابات مل جائیں ۔
    اللہ تعالیٰ سمجھنے کی توفیق عطاء فرمائے ۔آمین
    (ضروری گذارش :یہ جواب بھی ہم نے ایک بار پھر قارئین کرام کو اصلی حنفی صاحب کی ذہنیت اور سوچ کو واضح کرنے کے لئے ترتیب دیا ہے ۔۔۔لہذا اس کے بعد اگر کسی نکتہ کی وضاحت ضروری ہوئی تو ہم جواب دیں گے لیکن ہم ایک بار پھر اصلی حنفی صاحب سے مزید گفتگو کرنے سے معذرت چاہتے ہیں ۔۔۔اور ساتھ میں اصلی حنفی صاحب سے گذارش ہے کہ مصلحت پسندی کو کسی کی کمزوری سمجھنا چھور دیں۔)
  4. شرر

    شرر وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    95
    موصول پسندیدگیاں:
    2
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
  5. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    بھائی ناصر اور بھائی شرر

    مجھے بہت دکھ ہورہا ہے کہ آپ لوگوں کو غیر موضوع پوسٹ لکھنے پر مجبور کیا۔ اس میں میری ہی غلطی ہے۔ کیونکہ نہ میں آپ سے ایک اعتراض کا جواب بار بار مانگتا اور نہ آپ اسی اعتراض پر چادر ڈالنے کےلیے موضوع سے باہر لایعنی، بے مقصد، غیر موضوع، غیر محل باتیں لکھتے۔ اور شاید لکھتے ہوئے آپ بھائیوں کو تھکاوٹ یا پریشانی یا غصہ یا کچھ اور ضرور محسوس ہوا ہوگا۔ اور ان سب باتوں کی بنیاد میں ہی ہوں۔ اس پر معذرت خواہ ہوں۔ ہوسکے تو معاف کردینا۔

    محترم بزرگو!
    اگر جواب سے جان چھڑانی ہی تھی تو لکھ دیتے کہ اس بات کا جواب ان توجیہات کے علاوہ ہمارے پاس نہیں۔(اور توجیہات بھی ایسی کہ اگر کسی کوسمجھانی پڑ جائیں تو خود اپنا دم گھٹنے لگ جائے۔ کہ یہ کونسا پہاڑ ٹوٹ پڑا ہے۔پس لکیر کے فقیر بنتے چلتے بنو کوئی سوال وجواب نہ ہوں۔) بجائے اس کے غیر موضوع باتیں اور وہ بھی ہزاروں الفاظ پر مشتمل لکھنے اور پوسٹ کرنے کی تکلیف کرتے۔

    عزیزان!
    ان تمام غیر موضوع باتوں سے ایک بات تو واضح ہوچکی ہے کہ آپ مقلدین کے پاس اس سوال کا جواب ان توجیہات کے علاوہ بالکل نہیں ہے۔

    مشکل سے نجات
    چلو میں ہی آپ کی یہ مشکل حل کردیتا ہوں۔وہ اس طرح کہ چلو میں مان لیتا ہوں کہ تقلید دلیل پر ہوتی ہے لیکن دلیل کا مطالبہ نہیں کیا جاتا۔
    تو اب مجھے یہ بتائیں کہ اس دلیل کا مطالبہ کیوں نہیں کیا جاتا ؟ اور مجتہد سے دلیل کا مطالبہ کرنے کا حق کس کو ہے اور کس کو نہیں ؟
  6. شرر

    شرر وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    95
    موصول پسندیدگیاں:
    2
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
  7. Malang009

    Malang009 خوش آمدید مہمان گرامی

    اندھی تقلیدکا نتیجہ کہ عبارت نہ پوری ملی نہ پوری نقل کی ۔۔۔۔ انٹرنیٹ پر کئی کتابوں میں اس مسئلہ کی تفصیل موجود ہے ۔۔۔ چلو آج سب کو اپنی تحقیقی شخصیت دکھا کر یہ پوری عبارت نکال کر لاو ۔
  8. اعجازالحسینی

    اعجازالحسینی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    3,080
    موصول پسندیدگیاں:
    26
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Afghanistan
    جہاں تک میں سمجھا ہوں تو یہ اصلی حنفی صاحب بات کو الجھا رہے ہیں ۔ ایک جگہ فرماتے ہیں کہ آپکو اس قابل نہیں سمجھتا ، دوسرا ارشاد ہوتا ہے میرے پاس وقت نہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ میرے خٰیال میں انکے ساتھ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ وقت کا ضیاع ہے ۔
    جناب من میرے سوال کا جواب دیں پھر بات کرتے ہیں ۔

    [size=xx-large]آپکو آپکے والد صاحب کے متعلق کس نے بتایا کہ یہ آپکے والد صاحب ہیں ؟

    اور آپ نے کیسے یقین کیا ؟[/
    size]
  9. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    محترم شرر صاحب اور محترم ناصر صاحب
    پوسٹ نمبر84 میں آپ سے کچھ کہا گیا تھا ۔اسی سے متعلقہ بات کرنے کےبجائے شرر صاحب بیچ میں اور باتیں گھسیٹ لائے ہیں۔غیر متعلقہ ہونے کی وجہ سے توجہ سے محروم ہیں۔

    محترمین : میں نے پوسٹ نمبر 84 میں صاف الفاظ میں کچھ لکھا تھا پر بھائیوں نے اس پر توجہ نہیں دی۔ پھر وہی لایعنی بے مقصد اور غیر محل باتوں کی طرف چل نکلے۔حتی کہ شرر صاحب تو پوسٹ نمبر85 میں موضوع کو کہاں سے کہاں تک لے جانے کی کاوش میں ہیں حالانکہ پہلے بھی ان سے ان الفاظ میں کچھ کہا گیا تھا
    ’’ چلیں پھر آپ کو ہی آزما کر دیکھ لیتے ہیں۔لیکن ایک بات یاد رکھنا اپنی فضول بکواسات اپنے پاس ہی رکھنا۔اور مطلب کی بات کرنا۔اور میں بھی اپنی معروضات صرف مطلب تک ہی رکھوں گا۔ ان شاءاللہ ‘‘
    پتا نہیں کیوں اثر نہیں ہوا ؟

    سب باتوں کو چھوڑ چھاڑ کر مجھے یہ بتائیں کہ

    1۔تقلید بے دلیل بات پر ہوتی ہے یا بلا مطالبہ دلیل۔اور اس کے ساتھ یہ بھی بتائیں کہ ناصر بھائی کی تمام توجیہات سے یہ بات کیسے ثابت ہوتی ہے کہ دلیل تو ہوتی ہے لیکن دلیل کا مطالبہ نہیں کیا جاتا ؟ کیونکہ ایک طرف کہا جارہا ہے کہ تقلید دلیل پر بلامطالبہ دلیل ہوتی ہے اور دوسری طرف کہا جا رہا ہے کہ مجتہد کی بات قرآن وحدیث نہیں ۔ذرا وضاحت ہوجائے کہ جب مجتہد کی بات قرآن وحدیث ہے ہی نہیں تو پھر آپ اس بات کو کیوں بیچ میں لا رہے ہیں کہ دلیل تو ہوتی ہے لیکن دلیل کا مطالبہ نہیں کیا جاتا۔؟

    2۔اگر آپ یہ بات پیش کرنے سے قاصر و معذرو ہیں تو کوئی بات نہیں میں ماقبل بھی یہ کہہ چکا ہوں اور اب بھی کہتا ہوں کہ مزید آپ کو تکلیف وپریشان نہیں کرنا چاہتا اور نہ آپ کو بے موضوع باتیں لکھنے پر مجبور کرتا ہوں ۔میں ہی مان لیتا ہوں کہ ٹھیک ہے دلیل ہوتی ہے۔ تو اب آپ مجھے یہ بتائیں گے کہ دلیل کا مطالبہ کیوں نہیں کیا جاتا ؟ اس مطالبہ نہ کرنے کی آپ کے پاس کیا دلیل ہے؟ کہ اس دلیل سے یہ ثابت ہورہا ہے کہ مجتہد سے کسی بات کی دلیل طلب نہیں کی جائے گی۔

    نوٹ
    عارضی طور پر ماقبل جاری اعتراض کو مان رہا ہوں۔ ورنہ میرا اعتراض باقی ہے اگر کسی میں جرات ہے تو جواب عنایت کردے شاکر رہوں گا۔
  10. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    1۔ مجھے پوری عبارت ملی یا نہیں چلیں آپ ہی پیش فرمادیں پوری عبارت اور پھر اس کی بعید کی تاویل بھی۔ تاکہ اپنے تئیں کچہ دلی سکون ہو

    2۔ جو تفصیل ہے پیش کرو

    3۔ جتنی بھی عبارت پیش کی جارہی ہے آپ مقلدین کی مخالفت میں تو آپ ہی پوری عبارت نقل کرکے بتادیں کہ اس کا کیا مطلب ہے؟ ورنہ میں تو یہی عبارت پیش کرتا رہوں گا۔ چھٹکارا آپ کو ضرورت ہے تو تحقیقی شخصیت کا دکھلاوا بھی آپ کو کرنا ہوگا۔ میں اس کا ٹھیکیدار نہیں
  11. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    محترم تکنیکی ناظم صاحب آپ غلط سمجھے ہیں برائے مہربانی اپنی سمجھ کو درست کرلیں۔ میرا تو مشورہ ہے کہ آپ اپنی ساری سمجھ ناظمیت تک ہی محدود رکھیں۔ کیونکہ بذات خود یہ بہت بڑی ذمہ داری اور سمجھ والا کام ہے۔

    بات کو الجھا نہیں رہا مقلدین سے کچھ پوچھ رہا ہوں

    بات کو پورا پڑھ لیں معلوم ہوجائے گا۔ کہ کس ضمن میں اور کیوں بات کی گئی ہے۔

    ہا ہا ہا بہت خوب تو اس میں کیا الجھانے والی بات ہے؟ یا اس سے آپ کیسے الجھاؤ محسوس کررہے ہیں؟ مقلدین حضرات موضوع سے متعلق بات کریں میں کسی بھی طرح وقت نکال کر جواب دوں گا۔پس یہ ہوجائے گا کہ جواب لیٹ ملے گا جیسا کہ اب ہوا ہے۔

    میں تو حیران ہوں اور میری سمجھ بھی جواب دے رہی ہے کہ ناظم صاحب نے قابل نہیں سمجھتا اور میرے پاس وقت نہیں دونوں باتوں کو الجھاؤ والی باتیں کیسے ثابت کیا ؟


    بہت خوب یہی مشورہ پہلے بھی دیا جاچکا ہے اور اب دوبارہ آپ نے پیش کردیا ہے۔ جناب من میں کوئی قوالی شوالی یا گانے مانے نہیں لکھتا اور نہ ہی میں فضول کی بکواسات کرتا ہوں۔
    معقول بات کرتا ہوں اور معقول بات کرنے کا عادی ہوں آپ لوگ مجبور کرتے ہیں کہ اخلاق سے گری ہوئی باتیں لکھوں تو کبھی کبھی لکھ بھی دیتا ہوں جس کا مجھے احساس ہے۔

    میں نےکہا ناں کہ آپ اپنی سمجھ صرف ناظمیت کی ذمہ داری تک محدود رکھیں۔ کیونکہ جاری موضوع سے اس بات کا کیا تعلق ؟ اس لیے اس کا کوئی جواب نہیں دیا جاتا۔امید ہے کہ بات مان لوگے لیکن اگر پھر بھی اٹک گئے تو ٹھیک ہے اسی بات پر بھی آمنا سامنا کرلیں گے اور پھر میں دیکھوں گا کہ کتنے لوگ اپنے والدین کی والدیت سے مشکوک ہوتے ہیں۔ حتی کہ عظیم عظیم ہستیاں بھی۔
  12. ناصرنعمان

    ناصرنعمان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    58
    موصول پسندیدگیاں:
    23
    جگہ:
    Akrotiri
    کسی گاؤں میں ایک صاحب رہتے تھے ۔۔۔جنہیں مناظروں کا بے حد شوق تھا ۔۔۔۔ایک روز کسی سے بحث کرتے ہوئے جذبات میں آگئے ۔۔۔ اور کسی کو مناظرہ کا چیلنج کردیا ۔۔۔۔ اور ہارنے کی صورت میں دو لاکھ روپے دینے کا وعدہ بھی کر بیٹھے ۔۔۔حالانکہ وہ صاحب کافی غریب ہوا کرتے تھے۔۔
    بہرحال جب گھر پہنچے تو ان کی گھروالی کو معلوم ہوا کہ موصوف ہارنے کی صورت میں دو لاکھ دینے کا وعدہ کر آئے ہیں ۔۔۔۔ تو ان کی گھر والی بہت ناراض ہوئیں کہنے لگیں یہاں کھانے کے لالے پڑے ہیں اور آپ دولاکھ دینے کا وعدہ کر آئے ہیں ؟؟؟
    جس پر وہ صاحب ہنس کر بولے بیگم میں نے ہارنے پر دولاکھ کا وعدہ کیا ہے ۔۔۔۔ جب ہاروں گا تب ہی تو دوں گا ۔۔۔۔میں نے کب ہار ماننی ہے ؟؟؟
    باقی مزید تبصرے کی ضرورت نہیں ۔۔۔۔ لیکن تمام حضرات سے غور و فکر کی درخواست ہے کہ کیا ایسے لوگوں پر وقت لگانا وقت کا ضیاع نہیں؟؟؟ جو گھر سے ہی میں نا مانوں کا سوچ کر آتے ہیں ؟؟؟
    اور یہ ان کا ہی حال نہیں ۔۔۔۔ بلکہ ہمارے ساتھ تو ایک دفعہ ایسا بھی ہوچکا ہے کہ ایک قادیانی کے ساتھ بات چیت کے دوران مراسلات کی تعداد 500 سے بھی تجاوز کرگئی ۔۔۔لیکن حیران کن طور پر اُن صاحب کا بھی یہی دعوی تھا کہ موصوف کو کسی سوال کا جواب نہیں ملا ۔۔۔۔ ہے کسی میں جرات جو اُن کے سوالات ک جوابات دے سکے ؟؟؟
    واقعی ایسے لوگوں کو جواب دینے کے لئے کسی کو جرات نہیں ہوسکتی ۔
    (واضح رہے کہ قادیانی کے واقعہ سے مراد کسی کو قادیانیوں سے تشبیہ دینا نہیں بلکہ جواب ملنے کے بعد بھی “جواب نہ ملے“ کی گردان کرنے کی نشادہی کرنا ہے )
  13. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    بہت بڑھیا لطیفہ چھوڑا ہے۔ کہاں سے لائے میاں کہیں کوفہ سے نہیں لایا گیا ؟
    دووووو لاکھ ۔؟؟
    ہا ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا ہا

    بہت خوب ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا

    ہا ہا ہا ہا

    نوٹ:
    حضور والا ہمت تو کی لیکن بے مقصد ہمت۔ محترم تقلید بے دلیل بات پر ہی ہوتی ہے۔ کیوں بادلیل مگر بلامطالبہ دلیل کی رٹ لگا کر سادہ لوح عوام کی زندگی کو برباد کرتے جارہے ہو۔؟
    اور پھر اس بات کی پوری مقلدیت کے پاس دلیل نہیں ہے سوائے بعد کی تاویلات کے۔ اور مجھے حیرانگی اس بات پہ ہے کہ آپ نے لمبی لمبی پوسٹیں لکھ کر اس بات کا جواب دینے کی کوشش کی تھی ۔ ان پوسٹس سے یہ کیسے ثابت ہوتا ہے کہ تقلید بادلیل ہوتی ہے۔ حیرانگی ہے یار۔
    جناب من کے دماغ میں ایک بات نہیں گھسی وہ یہ کہ میں نے خود کہا بھی کہ ٹھیک ہے اگر آپ لوگ اس پر دلیل مہیا نہیں کرسکتے یا جیسا کہ آپ لوگوں کا مشہور محاورہ ہے کہ ’’امام صاحب کے پاس کوئی اور دلیل ہوگی۔۔ہا ہا ہا ہا ‘‘ تو آپ مطالبہ نہ کرنے کی حکمت اور کس دلیل پر مطالبہ نہ کرنے کی اینٹ رکھی گئی ہے یہ بتادیں۔؟

    کسی طرف تو آئیں بھی۔
  14. sahj

    sahj وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    163
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    السلام علیکم جناب اصلی حنفی

    پہلے ان سوالوں کے جواب دیجئے

    1
    اصلی حنفی صاحب اگر آپ واقعی اصلی حنفی ہیں تو پھر اپنے آپ کو اصلی حنفی ثابت کردیں۔

    2
    اگر جھوٹ موٹ اصلی حنفی بن کر آئے ہیں تو پھر اپنا اصلی عقیدہ بھی بتادیں۔

    3
    منافقوں والا طریقہ چھوڑ دیں اور آپ جو ہیں ، وہی بن کر بات کریں۔
    (یعنی غیر مقلد،شیعہ،بریلوی،وغیرہ)

    4
    تقلید ایک کی چھوڑی جائے یا سب کی ؟


    نوٹ:- بلکل سچی سچی جواب دینا ہے جناب پھر ان شاء اللہ آپ کو تقلید آپ کے ہی طریقے سے سمجھانے کی کوشش کروں گا۔



    شکریہ
  15. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    ایک اور آیا میدان میں شکار کروانےکےلیے

    اور باقی کتنے رہ گئے ہیں جو ابھی حصہ لیں گے اور آتے جاتے رہیں گے؟ اور ہر مقلد آتا ہے نئی باتیں پیش کرکے چلا جاتا ہے۔ یارو خدا خوفی کرو اورجو موضوع ہے جہاں پر رکا ہوا ہے وہاں سے ہی آگے چلاؤ اگر نہیں چلا سکتے تو پھر سر تیکہ پر رکھ کر گھری نیند ہی کرو تو اچھا ہے۔ پریشانی لینے کی ضرورت نہیں

    عزیز سہج بھائی

    آپ کی آمد تو دھماکہ خیز ہے لیکن دھماکہ ایسا کہ جس کی نہ آواز ہے اور نہ حیثیت۔ فضول، بےمقصد آمد کےلیے تہہ دل سے شکر گزار ہوں۔
    آپ کی پوسٹیں پڑھنے کی ملتی رہتی ہیں آپ موضوع کے علاوہ باہر کی باتوں پر بہت بات کرتے ہیں۔ اصل موضوع پر آتے ہی نہیں۔ آپ سےگزارش ہے کہ اگر آپ اس بحث کو لینا چاہتے ہیں تو موضوع سے بے موضوع کسی بھی بات کاجواب نہیں دیاجائے گا۔ کیونکہ فائدہ ہی نہیں ہے۔

    گمان غالب ہے کہ آپ نے جاری موضوع کو پڑھا ہوگا اگر نہیں پڑھا تو محترم پہلے پڑھ لیں تاکہ معلوم تو ہو کہ بات کیا ہورہی ہے اور پھر جس بات پہ موضوع رکا ہوا ہے اس کا جواب عنایت فرمادیں۔ بہت ہی شاکر ہوں گا۔

    نوٹ:
    آپ کی باتوں غیر محل ہیں اس لیے توجہ سے محروم ہیں بیچاری۔ اور اس سے آئندہ یہ بھی سوچ لینا تم کہ آئندہ بھی اسی طرح کی باتوں پر کبھی جواب نہیں دیا جائے گا۔ اس لیے اس طرح کی باتیں پیش کرکے نہ اپناٹائم ضائع کرنا اور نہ میرا۔ شکریہ
  16. sahj

    sahj وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    163
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    السلام علیکم اصلی حنفی صاحب
    آپ کا پہلا مراسلہ اس تھریڈ کا جس کی رو سے آپ سوال و جواب کے انداز میں مسئلہ تقلید سمجھنا چاہتے ہیں اور نام نہاد اہل حدیثوں اور اہل سنت والجماعت کے موقف کا حوالہ بھی دیتے ہیں ۔ تو پھر آپ آپ سے یہ تو پوچھنا میرا حق ہے کہ آپ منافق کیوں بنے؟ اصلی حنفی نام رکھ کر؟؟ صاف صاف بتاکیوں نہیں دیا کہ آپ فرقہ نام نہاد اہل حدیث کے مولویوں کے مقلد ہیں؟
    پہلے اپنا پہلا مراسلہ پڑھ لیں تاکہ آپ کو آپ کا سبق یاد ہوجائے، پھر مزید بات کرتا ہوں

    آپ جیسے سادے اور انپڑھ منافق ٹائپ بندوں کے سوالوں کے جواب دو طرح سے دئیے جاتے ہیں اک تو سوال کے جواب میں جواب اور دوسرا ٹائپ جو آپ والا ہے اسمیں سوال کے جواب میں سوال اور پھر آنے والے جواب کے جواب میں جواب دیا جاتا ہے ۔ سمجھ میں آیا یا مزید آسان کرکے سمجھاؤں؟ چلو بھئی سادہ لوح انپڑھ قسم کے منافق ٹائپ بندے بنام اصلی حنفی ، آپ سے جو سوالات پوچھے تھے وہ اسی فارمولے کے تحت تھے ۔ جب تک آپ اپنا موقف اور عقیدہ ظاہر نہیں کرتے آپ کو بات سمجھائی ہی نہیں جاسکتی اسلئے آپ پہلے ان سوالوں کے جوبات دیجئے جو آپ کے سامنے پیش کئیے تھے ۔پھر آپ کے جواب کی روشنی میں آپ کو جواب دیا جائے گا۔
    ان شاء اللہ تعالٰی
    کیونکہ آپ اب تک چورانوے مراسلات بھگت چکے ہو لیکن اپنی دم پر پاؤں نہیں آنے دیتے'@-@
    اسی وجہ سے جناب سے پوچھا ہے کہ اپنا عقیدہ بتاؤ تاکہ اسکے مطابق بات کو چلایا جائے ۔ یہ نہ کہنا کہ آپ سے سوال نہیں کیا جاسکتا کیونکہ آپ سادہ لوح انپڑھ بندے ہو ۔ بھئی مان بھی لیں کہ آپ انپڑھ سادے آدمی ہو تو بھئی پھر بھی نماز تو پڑھتے ہی ہوگے ؟ تو کس کے طریقے پر پڑھتے ہو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے طریقے پر جیسے اہل سنت والجماعت احناف پڑھتے ہیں یا پھر نام نہاد اہل حدیثوں کے طریقے پر ؟ یا پھر وہاں بھی یہی کہہ کر نماز چھوڑ دیتے ہو کہ میں تو سادہ اور انپڑھ عوام ہوں مجھے معلوم ہی نہیں کون سہی ہے کون غلط؟
    اسلئیے یہ تو آپ کو بتانا ہی پڑے گا کہ آپ کس فرقے سے تعلق رکھتے ہو فی الوقت ۔ باقی بات آپ کے جواب کے بعد۔
    شکریہ
  17. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    ہا ہا ہا ہا ہا ہا اوووووو ہا ہا ہا ہا اووو ہا ہا ہا ہا

    ایک بار کہا بھی تھا بلکہ شاید ایک بار نہیں کئی بار کئی ساتھیوں کو کہہ چکا ہوں۔ کہ اوئے مقلدو اللہ تمہیں ہدایت دے۔ ہٹ دھرمو ہمیشہ موضوع پر ہی بات کیا کرو۔ تحریری بحث ومباحثہ ہو یا آمنے سامنے مناظرہ۔ تم لوگ ہمیشہ اصل موضوع سے بھاگنےکے بہانے تلاش کرتے رہتےہو۔ کہ کہیں سے کوئی بہانہ ملے اور ہم وہاں سے سوراخ کرکے چپکے چپکے، آہستہ آہستہ، دھیرے دھیرے سلولی سلولی بھاگ نکلیں۔

    حضور سہج آپ کے لہجے اور آپ کی علمی قابلیت اور بات کرنے کا انداز تو سب کے سامنے ہے۔ برائے مہربانی آپ ادھر ادھر کی گپ شپوں اور فضول بکواسات سے دور رہتےہوئے ماقبل جاری بات پر ہی لکھیں تو اچھا ہے۔ ورنہ اس طرح کی بے موضوع بکواسات کا کبھی بھی جواب نہیں دیاجاتا رہے گا۔ اور ہاں اخلاقی حدود سے تھوڑا سا بھی پھسلنے کی کوشش کی تو منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔

    منافقت تم لوگوں میں ہے اور کہتے ہمیں ہو تم لوگ اللہ رسولﷺ، صحابہ رض الغرض دین اسلام کےدشمن ہو۔ اس لیے جناب ان لغویات میں نہ مجھے پڑنے دیں اور نہ خود پڑیں۔ اور نہ جوابی لغویات سنیں۔

    محترم ایک بار پھر گزارش ہے کہ اخلاقیات کے دائرے میں رہتے ہوئے جاری بحث جہاں پر رکی ہے اس کا جواب دیں۔ چلیں دوبارہ نقل کردیتاہوں

    تقلید بے دلیل بات پر ہوتی ہے یا بادلیل مگر بلا مطالبہ دلیل۔ اگر آپ کہیں کہ بادلیل مگر بلا مطالبہ دلیل پر ہوتی ہے تو پھر آپ کو دو باتوں کاجواب دیناہوگا

    1۔ بادلیل کاثبوت کہ ہاں تقلید واقعی دلیل پر ہوتی ہے۔مگر دلیل کامطالبہ نہیں کیاجاتا
    2۔ اور دوسری بات دلیل کا مطالبہ نہ کرنا یہ کس دلیل پر ہے۔ یعنی آپ کے پاس کیا دلیل ہےکہ دلیل کامطالبہ نہیں کیا جائےگا۔ اور پھر اگر کوئی دلیل کامطالبہ کرلے تو اس کاکیاحکم ہوگا۔

    جناب سہج اب قوی امید ہے کہ لغویات وبکواسات سے دور ہی رہیں گے۔ اورموضوع پر ہی بات کریں گے۔ اور آپ کو یہ بھی معلوم ہوگا کہ موضوع سے ہٹ کر بات کرنے والے کی شکست ہی ہوتی ہے۔ کیونکہ وہ تب ہی موضوع سے باہر باتیں کرتاہے جب اس کے پاس دلائل نہیں ہوتے۔

    اور ہاں مجھے ایسا لگ رہا ہے کہ آپ میں گالی گلوچ کی عادت انتہاء تک ہے۔ میرا مشورہ یہی ہےکہ اپنامنہ بند ہی رکھیں تو بہت اچھی بات ہوگی ورنہ کیاحشر ہوگا سب کے سامنےہوگا۔

    نوٹ:
    انتظامیہ اس سہج نامی کو کنٹرول میں رکھے ورنہ پھر اگر میری طرف سےکچھ غلط لکھنے کاعمل جاری ہوا تو پھر انتظامیہ مجھ سے گلہ کرنے کی حق دار نہیں ہوگی۔
  18. sahj

    sahj وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    163
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan

    ۔
    بہت خوب مسٹر اصلی منافق بہت خوب یہ ہے آپ کا فرقہ اہل حدیث کے مولویوں کا جاہل اور سادہ لوح عوام ہونے کا ثبوت اور تربیت۔ سادہ لوح ایسے ہیں تو شاطر لوح کیسے ہوں گے؟؟؟[]==[]

    مزید مسٹر اصلی فرماتے ہیں کہ “دلیل“ و “مطالبہ دلیل“ جبکہ میں نے مسٹر اصلی سے پوچھا تھا
    مسٹر اصلی تقلید کو آپ مانتے بھی ہو یا نہیں ؟ کیونکہ آپ کے مولوی جن کی آپ کفریہ تقلید کرتے ہیں انمیں سے اک کہتا ہے
    اور دوسرا کہتا ہے
    دیکھ لیجئے اور پھر ہوتا کیا ہے ؟ صرف اہل سنت والجماعت احناف سے بغض کی ہی وجہ سے جان بوجھ کر مسح کیا جاتا ہے اور عام اہل سنت افراد کو فتنہ میں ڈالا جاتا ہے۔لیکن اصل بات یہی ہے کہ غیر مقلدین یعنی نام نہاد اہل حدیث خود اسی تقلید کے شکار ہیں جسے وہ شرق اور کفر کہتے ہیں جیسے
    دیکھا مسٹر اصلی منافق ! عین آپ کی توقع کے مطابق سیالکوٹی نے الفاظ استعمال کئیے ہیں تقلید سے متعلق۔ پھولے نہیں سمارہے ہوگے آپ []--- خوشی سے بانچھیں چوڑی ہوگئی ہوں گی؟
    لیکن ٹھہرو ابھی ایک اور کفریہ فتوٰی دکھاتا ہوں آپ کو مسٹر اصلی۔


    آپ سے اسی لئے پوچھا تھا مسٹر اصلی کہ آپ اپنا عقیدہ بتادیں ، جوکہ آپ نے الفاظ میں نہیں بتایا لیکن اپنی “بکواس“ سے ظاہر کردیا ۔
    اب آپ صرف یہ کریں مسٹر اصلی کہ مجھے بتائیں کہ

    (آسان سوال)
    آپ تقلید مطلق کا مزہب رکھتے ہیں ؟ یا آپ کا مولوی کفر بکتا دنیا سے چلا گیا ؟ اور اگر تقلید مطلق پر آپ کا عمل ہے تو کیا دلیل کی بنیاد پر ہے یا صرف اپنے فرقے کا مولوی ہونا ہی کافی ہے؟

    اتنا کافی ہے بس %||:-{
  19. اصلی حنفی

    اصلی حنفی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    139
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    ہا ہا ہا ہا میرا کہنا سچ نکلا کہ حضور سہج گالی گلوچ کی پیداوار ہیں۔ہا ہا ہا ہا اور غالب گمان ہے کہ جب پیدا ہوئے ہوں گے تو یا ماں نے کسی کو گالی دے کر پہلا سبق دیا ہوگا یا جوساتھ دائیہ ہوگی اس نے۔ کیونکہ باپ تو اس ٹائم ہوگا ہی نئی۔ یا سہج باپ بھی اس ٹائم موجود تھا؟ اچھا موجود تھا۔ واؤ۔ پر مجھے نہیں معلوم تھا۔ چلو شکر ہے کہ آپ کی خاموشی نے اس کا جواب دے ہی دیا۔ ہاہا ہا ہا ہا ہا ہا

    مسٹر سہج مقلد منافق پہلے بھی تمہیں کہا گیا کہ موضوع کی مناسبت سےبات کریں لیکن پتہ نہیں خاص جگہ میں کیا آگ لگی ہوئی ہے (اس آگ کو ٹھنڈا کرنے کےلیے مقلدیت میں کوئی نہیں ملا؟) منافقت کی۔ اور پھر مزے کی بات ہے کہ الٹا چور کوتوال کو ڈانٹنے کا بھی مصداق بنے جارہے ہیں۔ منہ پر گند بھی لگایا ہوا ہے اور شور بھی مچا رہے ہیں کہ میرا منہ صاف ہے۔ آپ جیسی گندگی تو جناب ہمیشہ وہاں ہوتی ہے جہاں گٹر ہوتے ہیں۔۔تو یہاں کیا کررہےہو؟ ہش ہش ہش ہش ۔ آپ سے گندگی کی بو آرہی ہے۔

    تم شروع سے منافق منافق کی رٹ لگاتے جارہے ہو۔ صرف اس لیے کہ میں نے اپنا یوزر نیم اصلی حنفی رکھا ہوا ہے۔
    ارے عبداللہ بن ابی صرف نام پڑھتے ہی گند باہر نکل آیا۔؟ دوسروں کے کپڑوں پر لگےگند کو نہ دیکھا کرو منافق سائیں کبھی اپنے اندر و باہر دیکھ لیا کرو کہ میرے اندر کیا پلیدی ہے میں حلالی ہوں یاحرامی۔؟ اور میں یقین کامل سے کہتاہوں کہ توں حرامی ہے۔ اگر حلالی ہے تو پھر امام ابوحنیفہ کاقول پیش کر کہ توں حلالی ہے۔جب تک قول پیش نہیں کرےگا۔ تب تک میں تجھے حرامی کےنام سے پکاروں گا۔ سہج حرامی اب قول پیش کرکے سہج حرامی کےبجائے سہج حلالی بن جاؤ۔

    میں نے تمہیں عبداللہ بن ابی کہا کیوں؟ اس کا ثبوت بھی میرے پاس ہے۔ تم مقلدین عبداللہ بن ابی منافق سے بھی دو قدم آگے ہو۔ دعویٰ تو یہ ہےکہ ہم امام ابوحنیفہ رحمہ اللہ کےمقلد ہیں لیکن کیسےمقلد ہیں؟ یہ سچ ہے یا منافقت یہ دیکھ

    1۔عقائد میں دونوں فریق امام ابوالحسن اشعری اور امام ابو منصور ماتریدی کو امام و مقتدا مانتے ہیں۔ (اختلاف امت اور صراط مستقیم صفحہ نمبر ۳۷)

    2۔ہم اور ہمارے مشائخ اور ہماری ساری جماعت بحمداللہ فروعات میں مقلد ہیں مقتدائے خلق حضرت امام ہمام امام اعظم ابوحنیفہ نعمان بن ثابت رضی اللہ عنہ کے، اور اصول و اعتقاد یات میں پیرو ہیں امام ابوالحسن اشعری اور امام ابومنصور ماتریدی رضی اللہ عنہما کے (المھند علی المفند صفحہ ۲۹)


    دیکھا عبداللہ بن ابی منافق آپ نے ؟ کہ کیسی دعویٰ میں منافقت ہے۔ اب بتا حقیقی منافق یعنی عبداللہ بن ابی کا ساتھی توں اور تیری جماعت ہے یا میں ؟
    جھوٹا ثابت ہوا ناں تیرا اور تیری جماعت کا یہ دعویٰ کہ ہم امام ابوحنیفہ کےمقلد ہیں۔؟ عبداللہ بن ابی منافق یہ صرف ایک جھلک تھی ورنہ فروعات میں بھی تم منافق کتنی امام صاحب کی تقلید کرتے ہو؟ اس کو بھی اپنےوقت پر پیش کیاجائے گا۔

    نوٹ:
    حضور اب بھی چھوٹ دے رہا ہوں اور ایک بار پھر کہہ رہاہوں کہ یہ تمام بغیرتیاں اپنے پاس رکھ اور تمیز سے بات کرتےہوئے جو بات جاری ہے اس کاجواب دے۔ ورنہ پہلےبھی کہہ چکا ہوں اور اب بھی کہہ رہا ہوں کہ اگر اس طرح کی حرکت اب کی تو پھر مقلدیت کو سہارا دینے والا کوئی نہیں ہوگا۔ ان شاءاللہ
    اخلاق میں رہ کر بات کرو اور اخلاق میں رہ کر جواب لو۔ اگر ایک قدم بھی اخلاق سےباہر نکل کر جواب دو گے تو دوقدم اخلاق سےنکل کر جواب ملے گا۔ آئی سمجھ کہ نہیں ؟
    اب بھی تیرے پاس ٹائم ہےکہ توں یہاں تک ہی رک جا
  20. sahj

    sahj وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    163
    موصول پسندیدگیاں:
    0
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    النبي صلى الله عليه وسلم قال ‏"‏ أربع من كن فيه كان منافقا خالصا، ومن كانت فيه خصلة منهن كانت فيه خصلة من النفاق حتى يدعها إذا اؤتمن خان وإذا حدث كذب وإذا عاهد غدر، وإذا خاصم فجر‏"‏‏. ‏ تابعه شعبة عن الأعمش‏
    (بخاری، کتاب الایمان)

    رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ چار عادتیں جس کسی میں ہوں تو وہ خالص منافق ہے اور جس کسی میں چاروں میں سے ایک عادت ہو تو وہ ( بھی ) نفاق ہی ہے، جب تک اسے نہ چھوڑ دے۔ ( وہ یہ ہیں ) جب اسے امین بنایا جائے تو ( امانت میں ) خیانت کرے اور بات کرتے وقت جھوٹ بولے اور جب ( کسی سے ) عہد کرے تو اسے پورا نہ کرے اور جب ( کسی سے ) لڑے تو گالیوں پر اتر آئے۔ اس حدیث کو شعبہ نے ( بھی ) سفیان کے ساتھ اعمش سے روایت کیا ہے۔


    گالیاں جس انداز سے مسٹر اصلی منافق نے دی ہیں اس سے بحمدللہ مسٹر اصلی منافق کی منافقت کھل کر سامنے آچکی ہے اور ثابت مسٹر اصلی منافق نے خود ہی کردیا ہے کہ پیدہ ہوتے ہیں گالیاں کس نے سنیں ، اور کون حلالی دکھ رہا ہے اور کون حرامی۔ جو بندہ اپنے مزہب کو ہی چھپالے اور اس مزہب کا نام رکھ کر لوگوں کو دھوکہ دے جسے وہ مشرکوں کا مزہب کہتا ہو منافق کہتا ہو۔ یعنی مسٹر اصلی حنفی نامی غیر مقلد نام نہاد اہل حدیث صاحب نے منافقت کی گندی چادر اوڑھی اور اصلی حنفی نام کی آئی ڈی بنائی اور پھر ایک ناٹک رچانے یہاں پہنچے ، جبکہ ایسا کرنے کی کوئی ضرورت ہی نہیں تھی انہیں ۔ انکو تو یہاں اپنی اسی آئی ڈی سے آنا چائیے تھا جس سے یہ عام طور پر پہچانے جاتے ہیں اور اپنا عقیدہ چھپاکر گالیاں ہی گالیاں بکنا یہ منافقت نہیں تو کیا ہے؟ کیا یہی مزہب غیر مقلدیت ہے ؟
    ہاں یہی مزہب غیر مقلدیت ہے جس میں یہ نہ تو ائمہ کرام کو بخشتے ہیں اور ناں ہی صحابہ کو اور ناہی امہات المومنین رضوان اللہ علیہم اجمعین کو اور تو اور یہ نام نہاد غیر مقلد اہل حدیث نام رکھ کر نبی صلی اللہ علیہ وسلم پر بھی بکواس کرنے سے بعض نہیں آتے اور کہتے ہیں“شریعت اسلام میں توخود پیغمبر صلی اللہ علیہ وسلم بھی اپنی طرف سے بغیر وحی کے کچھ فرمائیں تو وہ بھی حجت نہیں ۔‘‘(طریق محمدی،مسٹر محمد جوناگڑہی)
    مسٹر اصلی غیر مقلد اب آپ اپنی آئی ڈی “اصلی غیر مقلد“ میں تبدیل کروا لیں ۔ یہ ایک مشورہ ہے آپ اسے مانیں یا نہ مانیں یہ آپ کی مرضی ہے ۔

    مسٹر اصلی غیر مقلد نے اپنے تئیں ہمیں ہماری منافقت دکھانے کی ناکام کوشش کی یہ دکھا کر۔


    لیکن اس میں منافقت ہے کیا چیز ؟ یہ بتایا نہیں ۔ اشعری و ماتریدی رحمہ اللہ اہل السنت والجماعت نہیں ہیں کیا ؟ مسٹر اصلی غیر مقلد یہ بات کہیں سے بھی منافقت نہیں ہے ہاں اگر اس بات کو چھپایا جاتا بیان نہ کیا جاتا تو پھر آپ کہہ سکتے تھے، اور المفند میں ہی علماء امت کی تائدی تصدیقات بھی موجود ہیں جناب جن سے صاف معلوم ہوتا ہے کہ تمام دنیا اسلام کے علماء نے ہمارے جوابات کو سچ تسلیم کیا اور علماء دیوبند کو صحیح العقیدہ اہل سنت والجماعت مانا۔اگر اس عقیدے میں منافقت ہے تو یہ آپ بتائیں کہ کیسے منافقت کہا آپ نے ؟ ہاں یہ یاد رکھئیے گا مسٹر اصلی غیر مقلد ، آپ کے صرف دو اصول ہیں ان کے مطابق ہی ثابت کیجئے گا ہمیں منافق۔ سمجھے جناب زاتی رائے والے کفریہ اقوالات اپنے مولویوں کے یا وہ اقوالات جو آپ کے ہاں “حجت نیست“ ہو انہیں پیش ہی نہیں کیجئے گا۔

    نوٹ:
    1
    مزید جواب دینے سے پہلے مسٹر اصلی غیر مقلد اپنی آئی ڈی کو تبدیل کروالیں تاکہ منافقت کی چھاپ اتر سکے ۔
    2
    گالیاں دینا مسلمانوں کا کام نہیں ، اس سے پرہیز کیجئے ۔
    3
    اب یہ آخری سوال رہ گیا ہے اسکا جواب بھی دے ہی دو مسٹر اصلی غیر مقلد ، تاکہ کم ازکم یہ تو معلوم ہو آپ کس درجہ کے غیر مقلد ہو۔
    شکریہ
موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔

اس صفحے کو مشتہر کریں