قوتِ عشق سے ہر پست کو بالا کر دے : علامہ اقبال

'نعت رسول مقبول صلی اللہ علیہ وسلم' میں موضوعات آغاز کردہ از راجہ صاحب, ‏مارچ 11, 2011۔

  1. راجہ صاحب

    راجہ صاحب وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    2,379
    موصول پسندیدگیاں:
    358
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    قوتِ عشق سے ہر پست کو بالا کر دے
    دہر میں اسمِ محمد(صلی اللہ علیہ والہ وسلم) سے اجالا کردے

    ہو نہ یہ پھول تو بلبل کا ترنم بھی نہ ہو
    چمنِ دہر میں کلیوں کا تبسم بھی نہ ہو

    خیمہ افلاک کا ایستادہ اس نام سے ہے
    نبضِ ہستی تپش آمادہ اسی نام سے ہے

    دشت میں، دامنِ کہسار میں ، میدان میں ہے
    بحر میں،‌موج کی آغوش میں ، طوفان میں ہے

    چین کے شہر مراکش کے بیابان میں ہے
    اور پوشیدہ مسلمان کے ایمان میں ہے

    چشم افلاک یہ نظارہ ابد تک دیکھے
    رفعتِ شان رفعنا لک ذکرک دیکھے

    از علامہ اقبال

اس صفحے کو مشتہر کریں