مسلم لائبریری بنگلور۔ایک تعارف

'اسلامی کتب خانے' میں موضوعات آغاز کردہ از احمدقاسمی, ‏جنوری 30, 2012۔

  1. احمدقاسمی

    احمدقاسمی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    3,624
    موصول پسندیدگیاں:
    790
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
    [size=x-large]
    مسلم لائبریری بنگلور​
    [align=center]ایک تعارف​
    [/align]
    اللہ رب العزت کا بے پناہ ٖضل وکرم ہے کہ شہر بنگلور کا اردو ،ادبی ودینی ادارہ مسلم لائبریری نے اپنے وجود کے 99 سال پور کر کے 100 ویں سال میں قدم رکھا ہے۔

    مسلم لائبریری دو منزلہ عمارت متصل یجمان محمد علی ہال نمبر 8، ویرا پلے اسٹریٹ ( جمعہ مسجد روڈ کراس )، شیواجی نگر ، بنگلور۔1۔ میں واقع ہے ۔ مسلم لائبریری ٹرسٹ ، بنگلور کے زیر اہتمام لائبریری کا سارا نظام لائبریری اور اس کی عمارت کی نگرانی واس کا کل انتظام ہے۔
    اس عظیم لائبریری کی شروعات 1912ءمیں ہوئی اس وقت چند محسنان ودانشوران ملت نے مسلمانوں میں پھیلی ہوئی تعلیمی پسماندگی ، مذہب اسلام کے متعلق پھیلائے گئے غلط فہمیوں اور بزرگان دین، اکابرین، سلاطین اور دیگر مشاہرین اسلام پر کی گئی اور کی جانے والی کردار کشی، مسلمانوں کو ان سے متعلق صحیح معلومات فر اہم کرنے اور زبان اردو کو فروغ دینے کی غرض لے کر اس کار خیر کا آغاز کیا۔
    اللہ رب العزت کا بے انتہا کرم ہے کہ لائبریری نے اس کام کو نہایت خاموشی اور پُر وقار طریقے سے انجام دیا ہے اور آج بھی یہ فرض بخوبی نباہ رہی ہے ۔
    لائبریری کو یا لائبری ٹرسٹ کو سر کا ر یا خیر سر کاری تنظیموں کی جانب سے کوئی مالی مدد حاصل نہیں ہے ۔ ملک ، قوم وملت کی دینی ، علمی ، ادبی واہل اردو کے شوق مطالعہ کی سیرابی کی خدمت ہی اس کا نصب العین ہے ۔ اردو کے عام قارئین /شائقین ادب کتب علاوہ اساتذہ، ریسرچ اسکالرس، طلباء وطالبات کی ضرورتوں کے لئے کثیر وغیر متعصبانہ میعاری لٹریچر فراہم کرنا اس کا اہم مقصد رہا ہے ۔
    مارچ 2008ء میں کر ناٹک اردو اکیڈمی ریاست کے قیام کے پچاس برس مکمل ہو نے کے جشن کے موقع پر تقریبا ایک صدی بھر سے مسلم لائبریری کی بے مثال خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے اسے'' سرنا کرناٹک'' کا معزز ترین اعزاز عطا کیا ۔ اور اکاڈمی سے شائع کردہ خوبصورت کتابچہ میں لائبریری کے متعلق یوں اعتراف کیا ہے کہ '' مسلم لائبریری اردو کے شائقین ادب کے علاوہ اساتذہ، محققین ، ریسرچ اسکالروں اور طلباء وطالبات کی ضرورتوں کو پورا کرنے کا واحد بڑا مرکز ہے ۔اس میں نہ صرف اہل اردو کی عصری ضرورتوں کو پورا کرنے کیلئے تازہ ترین مطبوعات کے علاوہ تحقیق وحوالہ جات کا وافر مواد مو جود ہے بلکہ اسے اردو کے علاوہ کرناٹک کہ ادبی وتہذیبی ترقی کی تاریخ کا بے مثال خزانہ کہا جا سکتا ہے ۔ مسلم لائبریری کو ریاست کر ناٹک میں خالص اردو کی خدمت اور پہچان کا ایسا نشان شناخت قرار دیا جا سکتا ہے جس نے ریاست کے اہل اردو کی سر بلندی اور وقار کو ایک صدی سے برار قائم رکھا ہے ۔
    انگریزی ادب، ناول ، تاریخ ، قرآن مجید ، تر جمہ وتفسیر اور انسائیکلو پیڈیا ، لغات ، کنڑ میں قرآن مجید وتفسیر ، کنڑ دینی معلومات دینی کتب بھی دستیاب ہیں ۔
    چونکہ علم کے حصول کا بہترین واہم ترین ذریعہ مطالعہ ہے اس وجہ سے مستقل طور پر اردو کے عام قارئین کے علاوہ طالبعلم ، اساتذہ ، ریسرچ اسکالرز ،شعراء وادیب ، صحافی ومترجم حضرات علماء کرام اور دیگر سنجیدہ ومعیاری لٹریچر کے متلاشی احباب لائبریری اور ریڈنگ روم میں کتابیں ورسائل کی اجرائی ، تحقیقی وحوالہ جاتی کام کی فراہم کردہ سہولیات سے نہایت پابندی کے ساتھ استفادہ کرتے ہیں۔
    شہر کے کئی معزز ، ممتاز ، با عزت وبا وقار خواتین وحضرات اپنی سعادت سمجھتے ہوئے لائبریری کے لائف ممبر بنے ہوئے ہیں۔
    اس عظیم لائبریروں کے بانیوں میں جناب عبد الرؤف ہیڈ ماسٹر مدرسہ اسلامیہ ، جناب میر عبد الحق مالک میر پریس ، جناب محمد عبد العزیز صدیقی فر نیچر شاپ ، جناب عظمت اللہ خلیل ، جناب فرید خان ٹیچر میو نسپل اسکول نیلسندر ، جناب محمد اظہر الدین شریف ٹیچر میو نسپل اسکول ، جناب محمد عبد الغنی ہارنس مر چنٹ ، جناب محمد صالح انصاری ایڈ وکیٹ اور جناب محمد خان محمود مصنف تاریخ سلطنت خداداد سر فہرست ہیں ۔
    لائبریری کی موجودہ جدید عمارت ، تشکیل نو اور اس کے استحکام میں جناب ایل محمد یوسف صاحب مر حوم ، جناب منشی عبد الغفور نعمانی ساحب مر حوم اور جناب عبد الکریم صاحب کا بڑا نمایاں اور اہم رول رہا ہے ۔
    ان 99 سالوں میں شہر وملک کی اہم شخصیتوں نے لائبریری کا دورہ کر کے اس کی عزت افزائی اور اپنے نیک تمناؤں کا اظہار کیا ہے جن میں علامہ داکٹر سر محمد اقبال رحمۃ اللہ علیہ ، علامہ سید سلیمان ندوی رحمۃ اللہ علیہ ۔حضرت جگر مرادآبادی ، مولانا شوکت علی ، بابائے اردو مولوی عبد الحق ، حضرت جوش ملیح آبادی سر فہرست ہیں اور موجودہ دور میں امیر شریعت کر ناٹک مفتی جناب محمد اشرف علی ، پرو فیسر جناب بی شیخ علی سابق وائس چانسلر گوا منگلور یونیورسٹیز ، پر وفیسر جناب م۔ن سعید سابق چیر مین کر ناٹک اردو اکاڈمی ، جناب سید ضمیر پاشا ، آئی اے یس ، جناب سید تحسین احمد کے اے یس ، تمل ناڈو کے نامور ومعتبر شاعر ، ادیب ، نقاد اور محقق جناب علیم صبا نویدی ( مدیر اعلیٰ نور جنوب ) جنئی اور انجمن ترقی اردو کیرالا شاخ کے رکن جناب کے پی شمش الدین سہ ماہی اردو بلیٹن کے مدیر اعلیٰ سر فہرست ہیں۔
    لائبریری میں مندرجہ ذیل عنوانات پر اردو میں قدیم وجدید سینکڑوں کتب ریفرنس سر کیولیشن کیلئے دستیاب ہیں ۔
    (1) قران مجید ، مرجم وتفاسیر (2) احادیث ۔ تراجم وتشریحات (3) سیرت نبو صلی اللہ علیہ وسلم ۔ سیرت صحابہ کرام رضی اللہ تعالیٰ عنہم ، اولیاء اللہ رحمۃ اللہ علیہ اور دیگر عظیم شخصیتوں کی سیرت وسوانح ، ان کی علمی ، ادبی ، سماجی اور سائنسی خدمات اور کار نامے ۔ (4) علوم اسلامی ۔ پند ونصائح اور فقہ اسلام ۔(5) تاریخ اسلامی اور دیگر تواریخ (6) ادب ، منثور ، مضامین ولکچرز ، طنز ومزاح (7) سیاسیات (8) تصوف اسلامی (9) سائنس (10) جغرافیہ ، سفر نامے (11) ڈارمہ جات (12) متحدہ ہند کے اخبارات اور رسائل (13) شعر وشاعری (14) صنعت وحر فت (15) طب/ حفظان صحت وعملیات (16) اسلامی ،تاریخی اور دیگر پاکیزہ ناول( 17) لغات اور انسائیکلو پیڈیا (18) تعلیم وقواعد (19) افسانوں کے مجموعے اور مزاحیہ مضامین (20) تاریخ اور سیرت حضرت ٹیہو سلطان شہید رحمۃ اللہ علیہ (21) ہندوستان کی آزادی میں حضرات علمائے کرام اور عام مسلمانوں کی جد وجہد وعظیم قر بانیاں
    لائبریری کی دلچسپ مکمل تاریخ اور یہاں پر دستیاپ ہونے والی کتابیں اور رسائل کی کتابیں اور رسائل کی ساری تفصیلات ادارہ سے شائع کی گئی فہرست کتب حصہ اول ،دوم میں درج ہیں جو /100 روپئے ہدیہ پر لائبریری سے حاصل کی جا سکتی ہے۔
    لائبریری کا انتظام سنبھالنے کے لئے ایک مجلس منتظمہ مقرر ہوئی ہے جس کے عہدیداران واراکین ہر دو سال میں ایک بار منتخب ہو تے ہیں۔ اس طرح ان 99 سالوں میں شہر کے اہم وممتاز شخصیتوں نے لائبریری کی ذمہ داریوں کو بہ حسن وخوبی انجام دیا ہے۔
    لائبریری کی پہلی منزل میں ریڈنگ روم واقع ہے جہاں پر شہر ،ملک وبیرون ملک کے بے شمار ومعروف اردو ،انگریزی روز نامے ہفت روزہ ، پندرہ روزہ، ماہنامے ،دو ماہی،سہ سالہ،شش ماہی اور سالنامے ہر وقت مہیا رہتے ہیں۔
    ملک بھر سے ہر ماہ اردو کے مایہ ناز ادیب ،شاعر،محققین اور پبلشرش اپنے تصانیف ومقالات لائبریری کو قاعدگی سے بطور عطیہ روانہ کرتے ہیں اور ایسی معیاری کتابیں اور رسائل مجلس منتظمہ شکریہ کے ساتھ قبول کرتی ہے۔

    [size=x-large]ممبر بننے کے خواہش مند حضرات وخواتین

    خود لائبریری تشریف لاکر یا سکریٹری سےبذریعہ ای میل سے رابطہ قائم کر کے تفصیلات حاصل کر سکتے ہیں
    ای میل:muslim_ library@rediffmail.com
    [/size][/size]



  2. اسداللہ شاہ

    اسداللہ شاہ وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    5,318
    موصول پسندیدگیاں:
    48
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    السلام علیکم
    جزاک اللہ فی الدارین

    سب سے پہلے تو میں الغزالی کی طرف سے مسلم لائبریری کے 100 سال کی طرف گامزن ہونے پر دل کی گہرائی سے مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ اس چھوٹے سے دارالمطالعہ کا اتنا بڑا کام جبکہ وہ کسی سے عطیات بھی نہ لیتا ہوں اللہ کا خاص فضل ہے۔ میں اللہ سے دعاگو ہوں کہ مسلم دارالمطالعہ کو دن دوگنی اور رات چوگنی ترقی دے۔ جناب احمد قاسمی صاحب آپکی تحریر پڑھکر پتا چلا کہ ہندوستان کے مسلمان بھی مسلمانوں کی دینی و ملی ذہنی ترقی کے لیے کیسے کوشاں رہے ہیں اور اس میں ایک بڑا حصہ مسلم لائبریری کا بھی ہے۔
  3. احمدقاسمی

    احمدقاسمی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    3,624
    موصول پسندیدگیاں:
    790
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
    شکریہ شاہ صاحب
  4. حیدرآبادی

    حیدرآبادی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    53
    موصول پسندیدگیاں:
    9
    لائیبریری کی عمارت کی کوئی تصویر ہو تو ضرور لگائیں۔
  5. آصف رضا

    آصف رضا وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    48
    موصول پسندیدگیاں:
    1
    صنف:
    Male
    جگہ:
    Pakistan
    ہمت کرے انسان تو کیا ہو نہیں سکتا۔شکریہ۔
  6. احمدقاسمی

    احمدقاسمی وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    3,624
    موصول پسندیدگیاں:
    790
    صنف:
    Male
    جگہ:
    India
    تصاویر لگائی گئیں تھیں۔منتظمین لائبریری کو پسند نہ آئیں ہٹا دی گئیں۔
  7. طاہر شیخ

    طاہر شیخ وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    26
    موصول پسندیدگیاں:
    10
    صنف:
    Male
    اب تصاویر کا اضافہ فرما دیں یقینا انتظامیہ کو اعتراض نہيں ہو گا
  8. طاہر شیخ

    طاہر شیخ وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    26
    موصول پسندیدگیاں:
    10
    صنف:
    Male

اس صفحے کو مشتہر کریں