کڑوا گهونٹ

'اصلاح معاشرہ' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد اجمل خان, ‏نومبر 6, 2017۔

  1. محمد اجمل خان

    محمد اجمل خان وفقہ اللہ رکن

    پیغامات:
    23
    موصول پسندیدگیاں:
    13
    صنف:
    Male
    کڑوا گهونٹ

    دنیا کی ہر قوم کڑوا گهونٹ پیتی ہے
    سوائے ہم پاکستانیوں کے ۔

    ان کا چائے کڑوا
    ان کا قہوہ کڑوا
    ان کی کافی کڑوی

    اور ایک ہم پاکستانی ہیں جو کڑوا گهونٹ پینا ہی نہیں جانتے ۔
    چائے پیئے گے تو دو دو تین تین چمچ شکر ڈال کر اور اگر شکر مفت کا ہو تو چائے کا شیرہ بنانے میں دیر نہیں کرتے ۔

    اگر کبهی کافی یا قہوہ پینا پڑ جائے تو شکر تلاش کرتے پهریں گے اور جب تک مل نہ جائے کڑوا گهونٹ نہیں پیئے گے۔

    ہم پاکستانی کڑوا گهونٹ پینے کے عادی نہیں لیکن کڑوا گهونٹ پلانے کے خوب عادی ہیں۔

    مجال ہے کہ کوئی کسی پاکستانی کو کڑوی بات بول کر نکل جائے ۔
    چاہے عرب کے بدو ہوں یا امریکی کڑوی بات بولے گا تو کڑوی کڑوی جواب سنے گا
    چاہے اس کڑوی کڑوی جواب پر جاب جانے کا کڑوا گهونٹ ہی کیوں نہ پینا پڑے ۔

    تحریر : محمد اجمل خان
    ۔
    اشماریہ نے اسے پسند کیا ہے۔

اس صفحے کو مشتہر کریں