حضرت معاذ رضی اللہ عنہ کی ولولہ انگیز تقریر

احمدقاسمی

منتظم اعلی۔ أیدہ اللہ
Staff member
منتظم اعلی
حضرت معاذ رضی اللہ عنہ کی ولولہ انگیز تقریر​
لوگو!علم حاصل کرو ، علم حاصل کرنا نیکی ،اس کا طلب عبادت اس کامذاکرہ تسبیح اور بحث جہاد ہے ۔جاہل کو علم سیکھانا صدقہ ہے تو اہل علم کے سامنے علمی گفتگو قرب الٰہی کا سبب ہے ۔
علم ، منازل جنت کا راستہ ،وحشت کا مونس ، مسافرت کا ساتھی ،تنہائی میں باتیں کر نے والا ، راحت وآرام کی راہ بتانے والا ، مصیبتوں میں کام آنے ولا دوستوں کی مجلس کی زینت اور دشمنوں کے مقابلہ میں ہتھیا ر ہے ۔اسی کے ذریعہ علماءِ قوم کے امام ورہنما بنتے ہیں ۔ فرشتے ان سے دوستی کے خواہش مند ہوتے ہیں ، برکت کے لئے ان سے مصافحہ کرتے اور استقبال کے لئے پیروں تلے پَر بچھاتے ہیں ، ہر تر وخشک چیز ان کے لئے دعا کرتی ہے حتی کہ پانی کی مچھلیاں زمین کے کیڑے مکوڑے اور جنگلوں کے درندے ۔
علم جہالت کی موت سے نکال کردلوں کی زندگی بخشنے والا، تاریکیوں میں چراغ اور کمزوریوں میں طاقت ہے، علم کا مطالعہ نفلی روزوں اور اس کا مذاکرہ تہجد کے قائم مقام ہے۔ اس سے انسان صلہ رحمی سیکھتا اور حلال وحرام میں تمیز پیدا کرتا ہے ،علم امام ہے عمل مقتدی ، علم مفید صرف نیک لوگوں کو حاصل ہوتا ہے۔
 

مولانانورالحسن انور

رکن مجلس العلماء
رکن مجلس العلماء
علم کا مطالعہ نفلی روزوں اور اس کا مذاکرہ تہجد کے قائم مقام ہے۔ اس سے انسان صلہ رحمی سیکھتا اور حلال وحرام میں تمیز پیدا کرتا ہے ،علم امام ہے عمل مقتدی ، علم مفید صرف نیک لوگوں کو حاصل ہوتا ہے۔
جزاک اللہ احسن الجزا
 

ziya

وفقہ اللہ
رکن
جزاک اللہ احسن الجزا
اسی قسم کاایک مضمون مفتی ناصرصاحب مظاہری کاحضرت علی رضی اللہ عنہ کی دوتقریروں پرپڑھاتھا۔
 
Top