بھولی بسری سنت

syed sadiq qadri

حکیم سید صادق قادری
رکن
بھولی بسری سنت
*
حضرت انس رضیﷲعنہ فرماتے ہیں کہ رسولﷲصلیﷲعلیہ وسلم نے مجھ سے ارشاد فرمایا"اے میرے بیٹے ۔ اگر تم سے ہوسکے تو تمہاری صبح و شام ایسی حالت میں ہو کہ تمہارے دل میں کسی کے لئے کینہ و بغض نہ ہو,تو ایسا ہی کیا کرو,
پھر ارشاد فرمایا"اے میرے بیٹے یہ میری سنت ہے۔ اور جس نے میری سنت سے محبت کی اس نے مجھ سے محبت کی اور جس نے مجھ سے محبت کی وہ جنت میں میرے ساتھ ہوگا۔"
(ترمذی ابواب العلم)
سبحان ﷲ اگر آج اس سنت پر عمل ہوجائے تو ہمارے اکثر مسائل حل ہوجائیں,
گھر میں امن و سکون ہوجائے,بہو ساس سے نفرت نہ کرئے نہ ساس بہو سے,نہ بھائی بھائی سے لڑے نہ بہنوں میں تلخ کلامی ہو,نہ نندوں پر طنز کئے جائیں نہ بھابھیوں کا مذاق اڑایا جائے,
گھر کے علاوہ اس سنت پر عمل کی صورت میں محلے بھی محبت کا گہوارا بن سکتے ہیں ,کوئی پڑوسی کسی پڑوسی کو برا نہ سمجھے ایک دوسرے کا خیال رکھا جائے۔
گھر کیا ,محلہ کیا پورا ملک امن و امان کی مثال بن جائے اگر اس بھولی بسری سنت پر عمل ہوجائے,نہ قتل ہو نہ لوٹ مار نہ قومیت کے نام پر فسادات ہوں نہ سیاست کے نام پر جھگڑے۔
اس ایک سنت کے اتنے دنیاوی فائدے ہیں ہم اندازہ بھی نہیں کرسکتے اور سب سے عظیم فائدہ جو آخرت میں ملے گا وہ مصطفی صلیﷲعلیہ وسلم کا جنت میں ساتھ۔
اللہ پاک اپنے حبیب صلیﷲعلیہ وسلم کے صدقہ ہمیں عمل کی توفیق عطا فرمائے۔آمین
تحریر:صادق
 
Top