جانے والے تیری یادوں کو بھلا کر دیکھا : افتخار جبیں

راجہ صاحب

وفقہ اللہ
رکن


جانے والے تیری یادوں کو بھلا کر دیکھا
لوح دل سے ترا ہر نقش مٹا کر دیکھا

ساری دنیا کو نظر آنے لگے تیرے نقوش
جب بھی آنکھوں میں کبھی تجھ کو چھپا کر دیکھا

تیرے جاتے ہی خفا ہو گئی دنیا ساری
بارہا ہم نے یہ احساس مٹا کر دیکھا

سنگ دل میری وفاؤں کا تو قائل نہ ہوا
زخم ہر بار نیا تو نے لگا کر دیکھا

راس کیوں دوستی آئ نہ کسی کی ہمکو
ہم نے ہر طور سے پیمان نبھا کر دیکھا

بھول بھی جو اب تو زمانے کے ستم اب تو جبیں
ہنسنے والومن نے تمہیں کتنا ستا کر دیکھا


افتخار جبیں​
 
Top