حضرت مولاناخلیل احمد سہارنپوری کا تقویٰ

مفتی ناصرمظاہری

کامیابی توکام سے ہوگی نہ کہ حسن کلام سے ہوگی
رکن
حضرت مولاناخلیل احمد سہارنپوری کا تقویٰ
میں نے خود تو یہ واقعہ نہیں دیکھا مگر دو واسطوں سے سنا ہے کہ حضرت اقدس سہارنپوری کی خدمت میں ایک صاحب عزیزوں میں سے جو بڑے رتبہ کے آدمیوں میں سے تھے، ملاقات کے لئے تشریف لائے۔ حضرت سبق پڑھا رہے تھے۔ اختتامِ سبق تک تو حضرت نے توجہ بھی نہیںفرما ئی۔ ختم سبق کے بعد حضرت ان کے پاس تشریف لائے۔ انہوں نے اصرار کیا کہ حضرت اسی جگہ تشریف رکھیں۔ حضرت نے ارشاد فرمایا کہ مدرسہ نے یہ قالین اسباق پڑھانے کے لئے دیا ہے ذاتی استعمال کے لئے نہیں دیا۔ اس لئے اس قالین سے علیٰحدہ بیٹھ گئے۔ البتہ یہ واقعہ میرا ہمیشہ کا دیکھا ہوا ہے کہ مدرسہ قدیم ( دفتر مدرسہ) میں حضرت کی ہمیشہ دو چار پائی رہتی تھیں۔ ان ہی پرحضرت آرام فرماتے تھے، ان ہی پر بیٹھتے تھے۔ مدرسہ کی اشیاء کو میں نے استعمال کرتے ہوئے نہیں دیکھا۔​
 

محمد نبیل خان

وفقہ اللہ
رکن
الحمد للہ ہمارے اکابرین کو یہ شرف ہے کہ ہمیشہ اللہ کی رضا کو مقدم رکھا اور ایسی ایسی مثالیں قائم کر گے کہ یار لوگ اس کا عشر عشیر بھی پیش نہیں کر سکتے ۔
 
Top