بتی چلی گئی

تانیہ

وفقہ اللہ
رکن
موجودہ حالات پہ کسی شاعر کی شاعری۔۔۔۔۔

پانچ دن ملے زندگی کے مگر
گزرے ہی تھے 4 کے بتی چلی گئی
کل واپڈا کے دفتر میٹنگ تھی کچھ خاص
ہونے لگی تکرار کے بتی چلی گئی
موت کی طرح اس کا بھی وقت نہ رہا
عید کی شاپنگ اور بھرا بازار کے بتی چلی گئی
سکول ٹائم اور واپڈا کی ذہانت
ناشتہ ہونے لگا تیارکے بتی چلی گئی
شادی والے دن بڑے خوش تھے ہم
گلے پڑنے لگے تھے ہار کے بتی چلی گئی
زرداری کے بعد تعریف کے قابل واپڈا والے
کوئی بھی ہو تہوار کے بتی چلی گئی
بتی رہی تو پھر ملیں گے جناب
محاورہ بدل گیا سرکار کیونکہ بتی چلی گئی
 

زوہا

وفقہ اللہ
رکن
واہ ! کیا بات ہے تانیہ جی
آپ نے پورے ملک کا مسلہ کتنے بہترین انداز میں پیش کیا ہے۔
کاش۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ کہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ یہ مسلہ ہماری حکومت جلد حل کرے ۔
 
Top